اٹارنی جنرل آف پاکستان مستعفیٰ ہونے کی اصل وجہ منظر عام پر آ گئی

استعفیٰ دیا نہیں گیا، لیا گیا ہے۔ زرائع

تفصیلات کے مطابق اٹارنی جنرل آف پاکستان انور منصور کے استعفیٰ نے ملک میں نئی بحث چھیڑ دی ہے ۔

اٹارنی جنرل آف پاکستان نے اپنا استعفیٰ صدر مملکت عارف علوی کو بھیج دیا ہے

با خبر حلقوں کے مطابق جسٹس قاضی فائز عیسی کیس میں فل بنچ کے بارے میں ریمارکس دینا اٹارنی جنرل کو مہنگا پڑ گیا

معروف اینکر اجمل جامی نے تبصرہ کیا کہ ایک سینئر کورٹ رپورٹر کے مطابق سرکار نے اٹارنی جنرل سے استعفیٰ لیا ہے۔

دوسری جانب معروف صحافی حامد میر کا کہنا ہے کہ اٹارنی جنرل نے کہا تھا کہ قاضی فائز عیسیٰ کیس میں سپریم کورٹ کے کچھ ججوں نے جواب لکھنے میں انکی مدد کی تھی، لیکن جب ان سے اس بات کے ثبوت مانگے تو وہ پیش نہ کر سکے

غالب امکان یہی ہے کہ یہی کیس انکے استعفیٰ کی وجہ بنا

 

    • جسٹس قاضی فائز عیسیٰ صاحب کو پاکستان کی عدلیہ ہی کا احترام کرتے ہوئے استعفیٰ دے دینا چاہیے ھے تاکہ عدلیہ کا وقار بلند ہو جائے اس جج صاحب کی وجہ سے ساری عدالتی کارروائی اور اس کے نظام پر سوالات اٹھ رھے ھیں امید ھے جسٹس فائز عیسیٰ صاحب اپنے کیس کو آنا کا مسلئہ نہیں بنائیں گے اور ملک، عدلیہ اور عوام کی خاطر جلد از جلد استعفی دے کر لندن اپنی فیملی کو جوائن کر لیں گے اور ملک پاکستان کی جان چھوڑ دیں گے قوم آپ کے استعفی کو عزت کی نگاہ سے دیکھے گی

      • انا کا مسلہ وہ لوگ بناتے ہیں جنمیں کچھ کردار ہو۔۔۔۔۔۔۔۔۔ یہ تو خود براہ راست چیف جسٹس بنا تھا۔۔۔۔۔ اگر اسمیں کردار کی کوئی رمق ہوتی تو پہلے یہ بلوچستان ہائیکورٹ کا براہ راست دوسروں کا حق مار کے چیف جسٹس بننے سے معذرت کرتا۔

        اور پھر بینچ پہ عجیب عجیب اعتراضات اُٹھائے کہ یہ فلانے ججز کو اس کیس کا فائدہ ہو رہا ہے اسلیے وہ جج نہ رہے۔ لیکن خود انہی وکلاء کا کیس سُن رہا ہے جو اسکا کیس مفت میں لڑ رہے ہیں۔۔۔۔۔۔۔


  • 24 گھنٹوں کے دوران 🔥

    View More

    From Our Blogs in last 24 hours 🔥

    View More

    This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept

    >