عورت مارچ کے خلاف دائر درخواست لاہور ہائیکورٹ میں سماعت کیلئے منظور

عورت مارچ رکوانے کی استدعا منظور کرتے ہوئے لاہور ہائیکورٹ نے دائر درخواست سماعت کے لیے منظور کر لی۔


تفصیلات کے مطابق عورت مارچ کے خلاف جوڈیشل ایکٹیوازم کونسل کے چیئرمین اظہر صدیق نے لاہور ہائیکورٹ میں درخواست دائر کرتے ہوئے عدالت سے استدعا کی تھی کہ عورت مارچ کو روکنے کا حکم دیا جائے۔ جس پر عدالت نے استدعا منظور کرتے ہوئے وفاقی تحقیقاتی ادارے (ایف آئی اے) کے ڈپٹی انسپکٹر جنرل آپریشنز اور وفاقی وزارت داخلہ سے رواں ماہ 27 فروری تک جواب طلب کرلیا۔

اظہر صدیق نے دائر درخواست میں موقف اپنایا کہ ملک میں انتشار اور عریانیت پھیلانے کے لیے عورت مارچ کو ریاست مخالف تنظیمیں اور پارٹیاں فنڈز فراہم کرتی ہیں۔ انہوں نے عورت مارچ کو اسلام کے خلاف قرار دیا اور اس کو خفیہ منصوبے سے بھی تشبیہ دیتے ہوئے کہا کہ اس مارچ کا مقصد صرف فحاشی پھیلانا ہے نا کہ عورتوں کے حق میں آواز اٹھانا۔ دائر درخواست میں وکیل اظہر صدیق نے کہا کہ گزشتہ سال ہونے والے عورت مارچ میں شرکا نے پلے کارڈز اور بینر اٹھا رکھے تھے جس پر قابل اعتراض پیغامات درج تھے۔

وکیل اظہر صدیق نے دائر کی گئی درخواست میں یہ موقف بھی اپنایا کہ انہوں نے عدالت سے رجوع کرنے سے قبل ایف آئی اے سمیت ’کیپٹل سٹی پولیس افسر‘ (سی سی پی او) کو بھی عورت مارچ میں خواتین کی جانب سے قابل اعتراض نعروں والے بینرز سے متعلق درخواست دی تھی مگر ان کی درخواست پر عمل کرتے ہوئے کوئی کارروائی عمل میں نہیں لائی گئی۔

درخواست گزار وکیل کا عدالت کو دی گئی درخواست میں کہنا تھا کہ انہوں نے پاکستان الیکٹرانک کرائم ایکٹ 2016، سٹیزن پروٹیکشن رولز 2020 اور ریڈ زون ایکٹ 2018 پنجاب کے تحت بھی متعدد درخواستیں دائر کیں مگر ان میں سے کسی ایک درخواست پر عورت مارچ کو رکوانے کے حوالے سے کوئی اقدام نہیں کیا گیا۔

اظہر صدیق نے درخواست کے ذریعے عدالت سے استدعا کی کہ عدالت عورت مارچ کی سوشل میڈیا پر تشہیر کے حوالے سے ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کرنے سے روکنے کا حکم دینے سمیت عورت مارچ کو روکنے کو بھی حکم دے اور انتظامیہ کو بھی اس طرح کے مارچ کو مال روڈ پر ہونے سے روکنے سے متعلق احکامات جاری کرے۔

  • Aurat march walee hee pakista kee ghareeb logoon khaas toor per aurtoon kee sab say baree exploiters hain,. Inn ko seedha jail mein dalna chiye. Nahee tu mardoon ka bhi rihhthay kay p++is er+ct ker kay saray aam phirain aur auratoon ko apni ankhain neechay rakhnee chiyeein.


  • 24 گھنٹوں کے دوران 🔥

    View More

    From Our Blogs in last 24 hours 🔥

    View More

    This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept

    >