عوام کے لئے بڑی خوشخبری،یوٹیلیٹی بلز تین ماہ بعد جمع کروا سکتے ہیں،مشیر خزانہ

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی برائے خزانہ ڈاکٹر عبدالحفیظ شیخ نے عوام کو خوشخبری سناتے ہوئے اعلان کیا کہ لاک ڈاون کے سبب عوام کو یوٹیلیٹی بلز فوری ادا کرنے کی کوئی ضرورت نہیں تین ماہ بعد بھی جمع کروائے جا سکتے ہیں۔

مشیر خزانہ حفیظ شیخ نے اسلام آباد میں منعقدہ تقریب میں خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کرونا وائرس کے باعث ملک میں لاک ڈاون کی وجہ سے مالی طور پر شدید دباؤ کی شکار عوام  کے یوٹیلیٹی بلز تاخیر سے ادا کرنے کا نقصان حکومت برداشت کرے گی جبکہ عوام تین ماہ بعد اپنے بلز جمع کروا سکتے ہیں جس پر ان کو کسی قسم کا کوئی جرمانہ ادا نہیں کرنا پڑے گا۔

تقریب سے خطاب کرتے ہوئے حفیظ شیخ نے کہا کہ حکومت نے متاثرہ افراد کی مدد کرنے کے لئے ایک کھرب دو سو ارب کا پیکج دیا ہے۔ حکومت کی جانب سے دیئے گئے پیکیج میں 100 ارب روپے یوٹیلیٹی بلز کے نقصان کو برداشت کرنے کے لیے مختص کیے گئے ہیں۔ جس سے غریب طبقہ کو ریلیف ملے گا۔

مشیر خزانہ نے کہا کہ لاک ڈاون کے باعث بند ہونے والے چھوٹے کارخانوں کے لیے بھی حکومت نے ریلیف پیکیج میں 100 ارب روپے رکھے ہیں جس سے چھوٹے کارخانوں کے مالکان کی مالی امداد کی جائے گی۔ جبکہ متاثرہ کاروباری حضرات کے لیے بھی پانچ بڑے فیصلے کیے گئے ہیں۔

OR comment as anonymous below

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے


24 گھنٹوں کے دوران 🔥

View More

From Our Blogs in last 24 hours 🔥

View More