مارکیٹ میں جعلی سینیٹائیزر کی بھرمار ، فواد چوہدری نے نشاندہی کر دی

کرونا وائرس کے ساتھ ہی مارکیٹ میں جعلی ہینڈ سینیٹائیزر کی بھرمار ایک رپورٹ کے مطابق اس وقت مارکیٹ میں دستیاب 23 برانڈزکے سینیٹائزر غیرمعیاری ہیں

تفصیلات کے مطابق کرونا وائرس کے خوف کے ساتھ ہی منافع خور اور جعلی کاروبار کرنے والے افراد بھی میدان میں آگئے۔ جیسے ہی مارکیٹ میں ہینڈ سینیٹائیزر کی ڈیمانڈ بڑھی، بعض لوگوں نے جعلی مصنوعات بنانے کے گھناونے کاروبار کا آغاز کر دیا۔

وزارت سائنس و ٹیکنالوجی کے ذیلی ادارہ پاکستان کوالٹی کنٹرول اتھارٹی کی رپورٹ کے مطابق مارکیٹ میں دستیاب 23 برانڈز کے سینیٹائزر کوغیر معیاری قراردے دیا گیا ہے۔ مختلف سینیٹائزر الکوحل کی مقدار پوری کرنے میں ناکام رہے،سینیٹائزر کا پی ایچ لیول بھی ڈبلیو ایچ او کے معیار کے مطابق نہیں ہے۔

وفاقی وزیرفواد چوہدری نے بتایا ہے کہ دستیاب سینیٹائزرز عالمی ادارہ صحت کے معیار کے مطابق نہیں، وزارت سائنس وٹیکنالوجی  نےغیرمعیاری سینیٹائزرز فوری مارکیٹ سے ہٹانے کی ہدایت کردی ہے۔ واضح رہے کہ غیرمعیاری سینیٹائزرز میں الکوحل کی مقدار60 فیصد نہیں ہے

OR comment as anonymous below

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے


24 گھنٹوں کے دوران 🔥

View More

From Our Blogs in last 24 hours 🔥

View More