احمد شہزاد کی شمالی علاقہ جات میں سیر سپاٹوں کی تردید

احمد شہزاد کی شمالی علاقہ جات میں سیر سپاٹوں کی تردید

 

تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز احمد شہزاد کی اپنی فیملی کے ہمراہ شمالی علاقہ جات میں سیر سپاٹوں کی خبریں سوشل میڈیا پر گردش کر رہی تھیں جس کی ان کی جانب سے تردید کی گئی ہے۔

احمد شہزاد کا سوشل میڈیا پر گردش کرتیں خبروں کی تردید کرتے ہوئے کہنا تھا کہ "میں اور میری فیملی شمالی علاقہ جات میں سیروتفریح نہیں بلکہ وہاں پر موجود مستحق اور نادار افراد میں امدادی سامان تقسیم کر رہے تھے جس کو سوشل میڈیا پر غلط رنگ دیا گیا”

قومی کرکٹر کا کہنا تھا کہ مجھے یہ جان کر بے حد دکھ ہوا کہ کچھ لوگوں نے صرف اپنے ذاتی مفادات کے لیے مجھے اور میری فیملی کو بدنام کرنے کی کوشش کی جبکہ اصل حقیقت اس کے برعکس ہے جو کہ کسی کو نہیں بتائی گئی۔

دوسری جانب جہاں کرونا وائرس کے باعث ملک بھر میں لاک ڈاؤن ہے۔ لوگوں کی آمدورفت پر مکمل پابندی ہے وہی قومی کرکٹر نے لاک ڈاون کے حکومتی احکامات کو بالائے طاق رکھتے ہوئے شمالی علاقہ جات کے علاقے سوات اور کالام کا رخ کیا جو کہ حکومت کی جانب سے لگائی گئی پابندیوں کا منہ چڑا رہا ہے۔

تاہم سکیورٹی نافذ کرنے والے اداروں کی جانب سے قومی سلامتی کو مقدم رکھتے ہوئے احمد شہزاد کو چترال جانے کی اجازت نہ دی گئی اور انہیں لواری ٹنل سے ہی واپس بھیج دیا گیا۔

Ahmed Shehzad Northern areas lock down

 

 

 

OR comment as anonymous below

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے


24 گھنٹوں کے دوران 🔥

View More

From Our Blogs in last 24 hours 🔥

View More