عمران خان کے پسندیدہ ترک شاعر’یونس امرہ’ کی زندگی پر ایک نظر

عمران خان کے پسندیدہ ترک شاعر'یونس امرہ' کی زندگی پر ایک نظر

وزیراعظم عمران خان کی ترک تاریخ میں دلچسپی کسی سے چھپی نہیں ہے سرکاری ٹی وی پر چلنے والا ترک ڈرامہ’ارطغرل’ اس کا منہ بولتا ثبوت ہے۔ جس کےنشرہوتے ہی پاکستان بھر میں عوام اس ڈرامے کے سحر میں مبتلا ہوگئے ہیں۔

اس ڈرامے کے بعد عمران خان ایک اور ترک ڈرامہ پاکستانی عوام کو دکھانا چاہتے ہیں۔تحریک انصاف کے رہنما فیصل جاوید نے ٹویٹ کیا اور بتایا کہا ارطغرل کے بعد عمران خان چاہتے ہیں کہ ترک ڈرامہ یونس امرہ پاکستان میں نشر کیا جائے۔

یونس امرہ 13ویں صدی میں اناطولیہ میں رہائش پزیر تھے۔ ان کی زندگی سے متعلق بہت سی معلومات تو تاریخ کے اوراق میں گم ہوگئیں لیکن ترکی کی لوک داستانوں میں اب بھی ان کی زندگی کی بیشتر کہانیاں زبان زدعام ہیں۔

یونس امرہ نے جب اناطولیہ میں آنکھ کھولی تو یہ ملک تجارتی ، سیاسی اور فنون لطیفہ کی سرگرمیوں کا مرکز تھا، ملک میں سلجوق حکومت کا زور ٹوٹ رہا تھا اور سلطنت عثمانیہ کے بانی ارطغرل اپنی طاقت بڑھا رہے تھے۔ سلجوقوں کے دور میں صوفی  مذہبی اور سیاسی معاملات میں حکومت کی راہنمائی کرتے تھے۔یونس امرہ  بھی سلجوق دور میں سرکاری عہدے پر فائز تھے۔

عمران خان کے پسندیدہ ترک شاعر'یونس امرہ' کی زندگی پر ایک نظر

یونس امرہ  پہلے ترکی کے صوفی شاعر تھے جو آسان ترک زبان میں شاعری کرتے تھے۔ اسی وجہ سے ان کا پیغام عوام کے دل کی گہرائی تک اتر جاتا تھا اور اسی وجہ سے ان کی مقبولیت اور مداحوں کی تعداد میں دن بدن اضافہ ہوتا گیا۔

یونس امرہ نے ‘وحدانیت’ خدا اور اس کے بندوں سے محبت کو اپنی تعلیمات کا محور بنایا۔ انہوں نے اپنی شاعری کے ذریعے اسلام کے تین درجے بیان کیے، پہلا ایمان یعنی خدا پر یقین، دوسرا، اسلام مطلب اسلامی تعلیمات پر عمل اور تیسرا احسان یعنی خدا کی مخلوق پر احسان کرنا، ان کا کہنا تھا کہ جو پہلے دو درجوں پر پورا اترے اور تیسرے کو تلاش کرے وہ صوفی کہلائے گا۔

عمران خان کے پسندیدہ ترک شاعر'یونس امرہ' کی زندگی پر ایک نظر

یونس امرہ کی شاعری کا سب سے پرانا ریکارڈ 15ویں صدی کے مسودوں کی صورت میں ملا ہے ۔ وہ اس سے پہلے بھی شاعری کرتے رہے تھے لیکن اس کا ریکارڈ ضائع ہوگیا یا مرتب نہیں کیا گیا۔

1923 میں جب مصطفیٰ کمال اتاترک نے جدید سیکولر ترکی کی بنیاد رکھی تو انھوں نے قوم پرست نظریے کو بڑھاوا دینے کے لیے یونس امرہ جیسے متعدد ترک ادیبوں، دانشوروں اور شاعروں کے کام کو فروغ دیا۔اقوام متحدہ نے 1991 میں بھی ان کی 750 ویں سالگرہ کے دن  کو  یونس امرہ کا سال قرار دیا۔

2015 پر ترکی کے ایک ٹی وی پر ان کی زندگی پر ڈرامہ سیریل یونس امرہ محبت کا سفر نشر کیا گیا جو اب نیٹ فلکس پر بھی موجود ہے،دو سیزن پر مشتمل اس ڈرامہ سیریل کو وزیراعظم عمران خان اردو زبان میں پاکستان میں نشر کرنے کی خواہش رکھتے ہیں۔

عمران خان کے پسندیدہ ترک شاعر'یونس امرہ' کی زندگی پر ایک نظر

  • It is worth watching but beware it is even slower paced than Ertugral although director is the same. Acting is good and environment appears quite real and legit with good attention to detail.

  • In this article Ahsan has been defined as doing favour to other people. Actually this Ahsan is derived from Arabic word Hasana meaning good.

    So in sofyism, Eman, Islam and then Ahsan is the essence. Here the meaning of Ahsan is making good and good to perfection your Eman and Islam.

    And not doing urdu Ahsan to other people. In Urdu it means doing favour to other but this Ahsan is from Arabic


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >