کاروباری بدحالی سے تنگ آکر کراچی کے تاجر نے خودکشی کرلی

کراچی میں صدر موبائل مارکیٹ کی عمارت کے چھٹے فلور سے موبائل فون کے تاجر نے مبینہ طور پر چھلانگ لگا کر خودکشی کرلی۔

پولیس کا کہنا ہے کہ واقعہ بظاہر خودکشی کا لگتا ہے جبکہ متوفی کے اہلخانہ کا کہنا ہے متوفی تاجر کو مالی مشکلات نہیں تھیں، خودکشی کا سبب نہیں جانتے۔مارکیٹ کے تاجروں کے مطابق تاجر عابد کی خودکشی کی وجہ کاروباری بدحالی ہے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ متوفی دکاندار عابد الیاس میمن نے چھٹے فلور سے مبینہ طور پہ چھلانگ لگاکر کر خودکشی کی، متوفی دکاندار کی دوسرے فلور پر موبائل کی دکان تھی۔

پولیس کا مزید کہنا ہے کہ لوگوں نے دکاندار عابد کو چھلانگ لگاتے ہوئے دیکھا تھا، عینی شاہدین کے مطابق دکاندار خود بالائی منزل تک پہنچا اور اس نے چپل اتار کر چھلانگ لگائی۔

ذرائع کا کہنا کہ مرحوم دکاندار عابد کی بلڈنگ کے سیکنڈ‌ فلور پر دکان تھی۔

متوفی کے اہلخانہ کا کہنا ہے کہ عابد کو کوئی گھریلو پریشانی نہیں‌ تھی، عابد کو نہ ہی کوئی کاروباری پریشانی تھی۔

صدر الیکٹرونکس ڈیلر رضوان عرفان کا کہنا تھا کہ کاروباری بدحالی کے سبب تاجر نے خودکشی کی، تاجر صوبائی اور وفاق حکومت کے سیاسی دنگل کے بھینٹ چڑھنے لگے، کاروباری بدحالی کے سبب الیکٹرونکس مارکیٹ میں ڈیلر کی خودکشی حکمرانوں کے منہ پر طمانچہ ہے حکومت ہوش کے ناخن لے اور سب کو کاروبار کی اجازت دے۔

مارکیٹس بند ہونے کے سبب تاجر برادری سب سے زیادہ نقصان برداشت کررہی ہے اور چھوٹے تاجر زیادہ پریشان ہیں جبکہ متعدد مارکیٹوں میں سیلز مینوں کو نوکری سے فارغ کردیا گیا ہے۔

OR comment as anonymous below

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے


24 گھنٹوں کے دوران 🔥

View More

From Our Blogs in last 24 hours 🔥

View More