بچوں کے پروگرام میں مولانا صاحب نے سائنس کے قانون بدل دیئے

بچوں کے پروگرام میں مولانا صاحب نے سائنس کے قانون بدل دیئے

تفصیلات کے مطابق جہاں پوری دنیا چاند کا سفر کر رہی ہے اور زمین سے پرے ایک اور دنیا بسانے کی سوچ رہی ہے وہیں ہمارے مدرسوں کے کچھ مولانا صاحبان ابھی اس تھیوری کو غلط اور صحیح ثابت کرنے میں لگے ہوئے ہیں کہ زمین سورج کے گرد گھومتی ہے یا سورج زمین کے گرد گھومتا ہے؟ اسی طرح کا منظر ایک لائیو پروگرام میں دیکھنے میں آیا جب مولانا صاحب نے سائنس کے قانون بدلتے ہوئے بچوں کو بتایا کہ زمین سورج کے گرد نہیں گھومتی بلکہ سورج زمین کا چکر لگاتا ہے۔

لائیو پروگرام کے دوران ایک بچے نے مولانا صاحب سے آسان سا سوال کیا کہ کیا ملک میں سردیوں کے آنے کی وجہ یہ بھی ہے کہ زمین گردش کرتی ہوئی سورج سے دور چلی جاتی ہے؟ جس پر مولانا صاحب نے حیرت میں ڈال دینے والا جواب دیا کہ زمین اپنی جگہ پر ساکن رہتی ہے جبکہ سورج زمین کے گرد چکر لگاتا ہے، جس کو معصوم بچے نے سچ مان لیا۔

مولانا صاحب نے بچے کے سوال کا جواب دیتے ہوئے بڑے اطمینان کے ساتھ جواب دیا کہ حدیث و قرآن کے مطابق زمین کے سورج کے گرد چکر لگانے کی سائنس بلکل غلط ہے، جس کا ثبوت ہمارے امیراہلسنت نے قرآن و حدیث کی روشنی میں دیا ہے، انہوں نے کہا کہ زمین ہمیشہ سے اپنی جگہ پر ساکن ہے جب کہ سورج گھومتا ہوا زمین کے اردگرد چکر لگاتا رہتا ہے۔

معصوم بچوں کا مستقبل داؤ پر لگاتے ہوئے مولانا صاحب نے معصوم بچوں کو ایک بات پر پکا کر دیا کہ جو بات ہمارے امام اہلسنت نے قرآن کی روشنی میں بتا دی ہے ہم نے صرف اور صرف اسی کو ماننا ہے کسی سائنس کی تھیوری اور ریسرچ کو نہیں ماننا، اس کے برعکس سائنس یہ بات کا واضح ثبوت اور دلیل دیتی آرہی ہے کہ سورج  اپنی جگہ پر ساکن ہیں جبکہ زمین اس کے گرد گردش کرتی رہتی ہے۔

    (2 posts)

    سائنس اور قران کے مطابق نہ زمین ساکن نہ سورج آپ نے بھی غلط لکھا ہے کہ سورج ساکن ہے۔

    (1 posts)

    We all come on the conclusion without giving a hypothetical scenario. All great Muslim as well as Greek scientist like Aristotle, ptolemy etc presented models of Geocentric System (Earth being the centre of Universe) whereas copernicus suggested Heliocentric (Sun being centre). I personally believes that it’s Geocentric and its again a deception by so called Dajjali System.

    (1 posts)

    یہ جس بھائی نے جو کچھ بھی لکھا ہے شاید اس نے قرآن اور حدیث کا مطالعہ نہیں کیا اگر قرآن اور حدیث کا مطالعہ کیا ہوتا تو اس قسم کی بے وقوفانہ باتیں نہ لکھتا ہم سائنس کو مانتے ہیں مگر جہاں پر سائنس قرآن اور حدیث سے ٹکرائے گی وہاں پہ ہم سائنس کو نہیں مانیں گے  قرآن پاک میں اور بے شمار احادیث مبارکہ میں یہ چیز ثابت شدہ ہے کہ زمین اپنی جگہ پر ساکن ہے سورج اور چاند زمین کے اردگرد گھومتے ہیں چکر لگاتے ہیں اور اور جن کو قرآن پاک ق اور حدیث کا ح پڑھنا نہیں آتا وہ علماء کی باتوں پر شک کرتے ہیں

    آپ خود جا کے کسی عالم دین کے پاس اپنا سافٹ ویئر اپ ڈیٹ کرواؤ

    کیونکہ آپ کے ذہن کے اندر نہ تو قرآن آتا ہے اور نہ حدیث کی بات آتی ہیں آپ کا دینی سافٹ ویئر ہو جائیگا تو آپ کو قرآن اور حدیث کی ہر بات سمجھ میں آجائے گی

OR comment as anonymous below

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے


24 گھنٹوں کے دوران 🔥

View More

From Our Blogs in last 24 hours 🔥

View More