بھارت کا دو پاکستانی سفارتکاروں کو تشددکے بعد ملک چھوڑنے کا حکم

بھارت کا نئی دلی میں موجود دو پاکستانی سفارتکاروں کو ملک چھوڑنے کا حکم

تفصیلات کے مطابق بھارت کی دشمنی سفارتی سطح پر بھی کھل کر سامنے آنے لگی، بھارت کی وزارت خارجہ نے اپنے ایک جاری بیان میں بھارت میں نئی دلی میں پاکستانی ہائی کمیشن میں تعینات دو پاکستانی سفارتکاروں کو جاسوسی کرنے کا الزام لگا کر ملک سے نکل جانے کا حکم دے دیا ہے، جو کہ سفارتی سطح پر شب خون مارنے کے برابر ہے۔

بھارتی وزارت خارجہ کا اپنے بیان میں مزید یہ کہنا تھا کہ حکومت نے مذکورہ دونوں اہلکاروں کو مشتبہ سرگرمیوں میں ملوث ہونے کی وجہ سے غیر مطلوب قرار دے دیا ہے کیونکہ ان کی سرگرمیاں ان کی حیثیت سے مطابقت نہیں رکھتی تھیں، جس پر انہیں 24 گھنٹوں میں بھارت چھوڑنے کا حکم دیا گیا ہے۔

بھارت کا نئی دلی میں موجود دو پاکستانی سفارتکاروں کو ملک چھوڑنے کا حکم

واضح رہے کہ پاکستان اور بھارت میں عرصہ دراز سے چلتے آرہے کشیدہ تعلقات کی وجہ سے ایسے اعلانات اکثر ہوتے رہتے ہیں، زرائع کے مطابق بھارتی وزارت خارجہ کی جانب سے دونوں پاکستانی سفارتی اہلکاروں عابد حسین اور طاہر خان کو بھارت چھوڑنے کی کوئی وجہ نہیں بتائی گئی، جبکہ پاکستان کی بھی وزارت خارجہ سے اس حوالے سے ابھی تک کوئی بیان یا رد عمل سامنے نہیں آیا۔

خیال رہے کہ سفارتی سطح پر ایک ملک کی جانب سے ایسے اعلانات کے بعد دوسرا ملک بھی اسی طرح کا قدم اٹھاتے ہوئے سفارتی سطح پر تعلقات ختم کرنے کی دھمکی یا کوشش کرتا ہے، اب دیکھنا یہ ہے کہ اسلام آباد سے اس طرح کا اعلان کتنی دیر میں سامنے آئے گا۔

OR comment as anonymous below

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے


24 گھنٹوں کے دوران 🔥

View More

From Our Blogs in last 24 hours 🔥

View More