وزیراعلیٰ پنجاب کا جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے قیام کا اعلان

وزیراعلی پنجاب نے جنوبی پنجاب صوبے کے وعدے کو حقیقی شکل دینے کی جانب ایک اور قدم کو بڑھاتے ہوئے جنوبی پنجاب سیکریٹریٹ قائم کرنے کی باقاعدہ اجازت دیدی۔

تفصیلات کے مطابق پولیس بیوروکریسی کاہیڈ کوارٹر ملتان میں قائم کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے، جبکہ سول بیوروکریسی کا ہیڈ کوارٹر بہاولپور میں قائم کیا جائے گا۔

انعام غنی کو ایڈیشنل آئی جی جنوبی پنجاب اور زاہد اختر زمان کو ایڈیشنل چیف سیکرٹری جنوبی پنجاب تعینات کردیا گیا جبکہ انتظامی معاملات کیلئے 385 افراد کی بھرتیوں کی منظوری بھی دیدی گئی ہے

جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ میں پلاننگ اینڈ ڈویلپمنٹ، صحت، انہار، توانائی، بلدیات، خزانہ، زراعت اورتعلیم کے شعبہ جات قائم کیے جائیں گے

جنوبی پنجاب کے ترقیاتی منصوبوں کے لئے 33 فیصد بجٹ مختص کیا گیا ہے اور جنوبی پنجاب کا بجٹ رِنگ فینسنگ کی وجہ سے کہیں اور ٹرانسفر نہیں کیا جا سکے گا۔

چندہفتے قبل وزیراعلی پنجاب نے جنوبی پنجاب صوبے کیلئے ایک اضافی چیف سیکرٹری اور آئی جی کی تعیناتی کی منظوری بھی دی تھی۔

وزیراعلی پنجاب کا کہنا تھا کہ یکم جولائی سے ایڈیشنل آئی جی ساتھ پنجاب اور ایڈیشنل چیف سیکرٹری ساتھ اپنی ذمہ داریاں سنبھالیں گے۔ جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے لئے آئندہ مالی سال کے بجٹ میں ایک ارب پچاس کروڑ مختص کر دیئے گئے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے قیام سے اپنا ایک بڑا وعدہ پورا کر دیا ہے۔ تحریک انصاف کی قیادت جو کہتی ہے کرکے دکھاتی ہے۔ اس سیکرٹریٹ کے قیام سے جنوبی پنجاب کے عوام کے مسائل ان کی دہلیز پر حل کرنے میں مدد ملے گی۔

OR comment as anonymous below

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے


24 گھنٹوں کے دوران 🔥

View More

From Our Blogs in last 24 hours 🔥

View More