میں نے کوئی قتل نہیں کیا،بے گناہ ہوں،عزیر بلوچ کا یوٹرن

لیاری گینگ وار کے سرغنہ عزیر بلوچ کو ارشد پپو قتل کیس میں عدالت میں پیش کیا گیا، جہاں پر عزیر بلوچ اپنے 164 کے بیان سے مکر گیا اور عدالت سے کہا کہ میں نے کوئی قتل نہیں کیا اللہ کو حاضر ناظر جان کر کہتا ہوں کہ میں بے گناہ ہوں۔

عدالت نے عزیر بلوچ سے استفسار کیا کہ آپ پر ارشد پپو کے قتل کا الزام ہے، کیا آپ نے جرم کیا ہے؟ کیا آپ پر فرد جرم عائد کر دی جائے؟ عدالت کے استفسار کرنے پر عذیربلوچ نے یو ٹرن لیتے ہوئے عدالت سے کہا کہ میں نے کوئی قتل نہیں کیا میں بالکل بے گناہوں،مجسٹریٹ نے غلط بیانی کی ہے۔

عزیر بلوچ نے عدالت میں بیان دیا کہ میرے ساتھ جعلسازی ہو رہی ہے، جس پر عدالت نے عزیر بلوچ سے کہا کہ جو بیان آپ یہاں دے رہے ہیں کل کو آپ ہائی کورٹ جا کر بھی مکر جائیں گے، تاہم عدالت نے وکیل صفائی کی عدم حاضری پر لیاری گینگ وار ، ارشد پپو قتل کیس کے علاوہ 16 مقدمات کی سماعت جولائی کے آخری ہفتے تک ملتوی کردی۔

  • پاکستان میں سزا کب کسی قومی مجرم کو ملتی ہے ،   اس کا بھی ایسا ہی حال ہے ،   "با عزت” بری ہونے کے لئے معصوم ثابت کرنا ضروری ہے 
    قوم کو جلد ہی خوش خبری ملے گی ،  قومی ہیرو قرار دیا جائے گا جس نے بے قصور عقوبت برداشت کی ،   قومی ہیرو  جیسا استقبال ہوگا

    پاکستان زندہ باد 


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >