کوٹ ادو: جن نکالنے کے بہانے جعلی پیر نے 15 سالہ لڑکے کو جلا کر مار ڈالا

کوٹ ادو: جن نکالنے کے بہانے جعلی پیر نے 15 سالہ لڑکے کو جلا  کر مار ڈالا

کوٹ ادو کے علاقے محمود کوٹ میں ایک دل دہلا دینے والا واقعہ پیش آیا،جس میں جعلی پیر نے جن نکالنے کے بہانے 15 سالہ لڑکے کو پہلے تشدد کا نشانہ بنایا پھر ابلتے ہوئے تیل کی کڑھائی میں اس کا منہ جلا دیا، بچے کی حالت غیر ہونے پر جعلی پیر نے زخمی بچہ اس کے لواحقین کے حوالے کردیا۔

بچے کے والد کا جعلی پیر کے خلاف دی گئی ایف آئی آر میں کہنا تھا کہ میں محمود کوٹ کا رہائشی ہوں میں اپنے بیٹے کو عبدالغفار کے پاس دم کروانے کے لیے لے کر گیا، عبدالغفار میرے بیٹے کو علیحدہ ایک کمرے میں لے گیا اور ایک گھنٹے کے بعد مجھے میرا بیٹا شدید زخمی حالت میں تھما دیا۔

بچے کے والد نے پولیس کو مزید بتایا کہ جعلی پیر میرے بچے کا منہ ابلتے ہوئے تیل کی کڑھائی میں جلاتا رہا اور اس پر شدید تشدد بھی کرتا رہا، جب میرے بچے کی حالت بہت خراب ہوگئی تو جعلی پیر میرے بیٹے کو ہمارے حوالے اور جن ہمارے گھر بھیجنے کی دھمکی دے کر خود وہاں سے فرار ہوگیا جبکہ چند گھنٹوں بعد ہی میرا بیٹا جاں بحق ہوگیا۔

جاں بحق بچے کے والد کے بیان پر پولیس نے دفعہ 302 کے تحت مقدمہ درج کرلیا، تاہم پولیس کا اپنے بیان میں کہنا تھا کہ ہم نے بچے کو تشدد کرکے مارنے والے جعلی پیر کی گرفتاری کے لیے چھاپے مارنے شروع کر دیے ہیں اور ان کے ورثاکو یہ یقین دہانی کروائی ہے کہ بہت جلد جعلی پیر جیل کی سلاخوں کے پیچھے ہو گا۔

  • He was a schizophrenia patient and his parents took him to molvi, what else you can expect. What a painful death he suffered. Until people will believe in Jin, they will keep going to molvies and molvies keep killing innocent people. Sad,


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >