توشہ خانہ کیس:نواز شریف کی رہائش گاہ کے باہر عدالتی نوٹس چسپاں کر دیا گیا

سابق وزیراعظم نواز شریف کی رہائش گاہ جاتی امرا کے باہر توشہ خانہ کیس میں راولپنڈی کی احتساب عدالت کا نوٹس چسپاں کر دیا گیا ہے، نواز شریف کی رہائش کے باہر چسپاں کئے گئے عدالتی نوٹس میں ان کو توشہ خانہ کیس میں 17 جولائی کو عدالت میں پیش ہوکر وضاحت دینے کا حکم دیا گیا ہے۔

سابق وزیراعظم نواز شریف کی رہائش  گاہ کے باہر عدالتی نوٹس چسپاں کرنے سے قبل عدالت نے  توشہ خانہ کیس میں نواز شریف کی مسلسل عدم حاضری پر اشتہاری قرار دینے کی کارروائی شروع کی تھی، اس کے علاوہ عدالت کی جانب سے سابق صدر آصف علی زرداری کے قابل ضمانت وارنٹ گرفتاری بھی نیب کو ارسال کیے گئے تھے۔

عدالت نے اپنے نوٹس میں توشہ خانہ کیس میں نواز شریف کو پیش ہوکر وضاحت دینے کا آخری موقع دیا ہے، عدالت نے اپنے اشتہار میں کہا ہے کہ سابق وزیراعظم نواز شریف جان بوجھ کر عدالت میں پیش نہیں ہو رہے اور بار بار طلب کیے جانے کے باوجود مفرور ہے۔

دوسری جانب سابق صدر آصف علی زرداری کے توشہ خانہ کیس میں بار بار عدالت میں طلب کیے جانے کے باوجود پیش نہ ہونے پر عدالت نےزرداری کے قابل ضمانت گرفتاری کے وارنٹ نیب کو ارسال کئے ہیں، جس میں عدالت نے احکامات دیئے ہیں کہ اگر اب بھی آصف علی زرداری اپنے کسی ضامن کے ساتھ عدالت میں پیش نہیں ہوتے تو  گرفتار کر کے عدالت میں پیش کیا جائے تاکہ ان سے توشہ خانہ کیس پر وضاحت لی جا سکے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >