کراچی میں آٹے کی قیمتیں بے قابو، فی کلو 6 روپے مہنگا

کراچی میں آٹے کی قیمتیں بے قابو، فی کلو 6 روپے مہنگا

سندھ حکومت کی بد انتظامی کی وجہ سے کراچی میں آٹے کی قیمتوں کو پر لگ گئے، ڈھائی نمبر آٹا ریٹیل بازار میں فی کلو 6 روپے مہنگا کر دیا گیا، جس کے بعد ڈھائی نمبر آٹے کی فی کلو نئی قیمت 54 روپے ہوگئی۔

مارکیٹ ذرائع کے مطابق ڈھائی نمبر آٹے کا 50 کلو کا تھیلا جو پہلے چوبیس سو روپے میں فروخت ہو رہا تھا اب اس میں تین سو روپے کا اضافہ ہوگیا ہے جس کے بعد پچاس کلو تھیلے کی نئی قیمت 27 سو روپے ہو گئی ہے۔

ریٹیل بازار میں ڈھائی نمبر آٹے کی قیمت کی طرح فائن آٹے کی قیمت میں بھی چار روپے فی کلو کا اضافہ ہو گیا ہے، جس کے بعد فائن آٹے کی فی کلو نئی قیمت 58 روپے ہوگئی ہے، فائن آٹے کا50 کلو کا تھیلا جو پہلے مارکیٹ میں 27  سو روپے میں دستیاب تھا اب دو سو روپے کے اضافے سے 29 سو روپے میں فروخت ہو رہا ہے۔

کراچی میں آٹے کی بڑھتی ہوئی قیمتوں پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے ذرائع ابلاغ ڈاکٹر شہباز گل کا سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹویٹر پر ٹویٹ کرتے ہوئے کہنا تھا کہ "‏کل ایک میٹنگ میں سندھ گورنمنٹ کو بتایا گیا کہ ان کی بد انتظامی کی وجہ سے سندھ میں 20 کلو آٹا 1075 روپے اور پنجاب میں 860 روپے میں بک رہا ہے کیونکہ سندھ گندم ریلیز نہیں کر رہا۔بجائے اس کہ سندھ حکومت گندم ریلیز کرتی آج مرتضی کذاب نے سندھ میں آٹے کہ مہنگے ہونے کا زمہ وفاق پر ڈال دیا”

 

سندھ حکومت کے ترجمان مرتضی وہاب کے کراچی میں آٹے کی قیمتیں بڑھنے کا وفاق کو ذمہ دار ٹھہرانے پر ڈاکٹر شہباز گل کا رد عمل دیتے ہوئے ٹوئٹر پر جاری اپنے ٹویٹ میں کہنا تھا کہ ” ‏کوئی مرتضی کذاب کو بتائے کہ سندھ میں حکومت پی پی کی ہے۔ پرچی چیئرمین صاحب گندم ریلیز کریں جیسے پنجاب اور کے پی کر رہا ہے۔ تا کہ سندھ میں بھی قیمت کم ہو۔کیا آپ حکومت میں صرف اربوں روپے کی گندم چوری کرنے کے لئے ہیں ؟اس بار آپ کی گندم چوری اور نااہلی کی قیمت پورا ملک نہیں بھگتے گا”۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >