پارلیمنٹ ہاؤس میں سینیٹ کے مونوگرام والے سگریٹ کے پیکٹ تقسیم

 پارلیمنٹ ہاؤس میں سینیٹ کے مونوگرام والے سگریٹ کے پیکٹ تقسیم

سگریٹ نوشی ممنوع ہونے کے باوجود پارلیمنٹ ہاؤس میں سینیٹ کے مونوگرام والے سگریٹ کے پیکٹ تقسیم

خبر رساں ادارے  کے مطابق پارلیمنٹ ہاؤس میں سگریٹ نوشی پر پابندی ہونے کے باوجود سینیٹ کے مونوگرام کے ساتھ چھپے  سگریٹ کے پیکٹس پارلیمنٹ ہاؤس میں تقسیم کئے گئے۔

سینیٹ کے مونوگرام والے سگریٹ کے پیکٹ مسلم لیگ ن سے تعلق رکھنے والے سینیٹر دلاور خان کی جانب سے ارکان پارلیمنٹ ہاؤس میں تقسیم کئے گئے، سینیٹ ہاؤس نامی سیگریٹ کے پیکٹس پارلیمنٹ ہاؤس میں تقسیم ہونے پر بعض سینیٹرز نے برہمی کا اظہار کرتے ہوئے اسے ناپسندیدہ مشغلہ بھی قرار دیا ہے۔

لیگی سینیٹر دلاور خان کے اس فعل کی بعض ارکان نے شدید مخالفت کرتے ہوئے کہا کہ سینیٹ کے مونوگرام اور سینیٹ ہاؤس کے نام سے متعارف کروائے گئے سگریٹ کے برانڈ کی اجازت ہرگز نہیں دی جا سکتی یہ غیر قانونی ہے، ہم اس کی مذمت کرتے ہیں۔

خبر رساں ذرائع سے بات کرتے ہوئے سینیٹر میاں عتیق کا اس حوالے سے کہنا تھا کہ اگرچہ پارلیمنٹ ہاؤس میں تمباکو نوشی کی اجازت بالکل بھی نہیں ہے لیکن اگر کوئی ذاتی حیثیت میں اس کا تحفہ دیتا ہے تو یہ اس کا بنیادی حق ہے، انہوں نے کہا کہ میں سگریٹ نوشی تو نہیں کرتا اور نہ ہی مجھے سینیٹ کے مونوگرام والے سگریٹ کا پیکٹ ملا ہے، البتہ ہو سکتا ہے وہ میرے گھر پر آ جائے۔

ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ سینیٹ کے مونوگرام والے  سگریٹ تقسیم کرنے والے سینیٹر دلاور خان کی مردان میں سگریٹ کی فیکٹری ہے۔

  • سینیٹ ہاؤس  برانڈ  سگریٹ ، پارلیمٹ ہاؤس برانڈ ہیروئن کے پیکٹ   صوبائی اسسمبلی برانڈ چرس کے پیکٹ بھی دلاور خان اور رانا سنا اللہ بہت جلد مارکیٹ میں لانے والے ہیں  


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >