ڈاکٹر ظفر مرزا کی جگہ کسے وزیر اعظم کا معاون خصوصی برائے صحت لگایا گیا ہے ؟

سابق معاون خصوصی برائے صحت کے استعفے کے بعد ڈاکٹر فیصل سلطان کو معاون خصوصی برائے صحت مقرر کر دیا گیا ہے جس کے لیے نوٹی فکیشن بھی جاری کر دیا گیا ہے، اطلاعات کے مطابق ڈاکٹر فیصل سلطان کا عہدہ وفاقی وزیر کے برابر ہو گا۔

دفتر وزیراعظم سے جاری ایک اعلامیے میں بتایا گیا کہ وزیراعظم نے ڈاکٹر فیصل سلطان کو معاون خصوصی برائے قومی صحت سروسز، ریگولیشنز اور کوآرڈینیشن مقرر کیا ہے، جس کا اطلاق فوری طور پر ہوگا۔

ڈاکٹر فیصل سلطان شوکت خانم ہسپتال میں بھی ذمہ داریاں سرانجام دے چکے ہیں، اور اسی حوالے سے ان کو وزیراعظم کے بہت قریبی سمجھا جاتا ہے۔ کورونا کے پھیلاؤ کے بعد وزیراعظم کے سپیشل احکامات پر ڈاکٹر فیصل کو لاہور سے اسلام آباد بلا لیا گیا تھا۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق ڈاکٹر فیصل سلطان ڈاکٹر ظفر مرزا کے منظر عام سے غائب ہونے کے بعد تمام تر ذمہ داریاں سنبھالے ہوئے تھے اور ان کو صحت کے شعبے میں بہت تجربہ کار مانا جاتا ہے۔ واضح رہے کہ ڈاکٹر فیصل سلطان وزیراعظم کے فوکل پرسن برائے کووڈ 19 کے طور پر بھی خدمات انجام دے رہے ہیں۔ ڈاکٹر فیصل سلطان کو ڈاکٹر ظفر مرزا کے معاون خصوصی برائے صحت کے عہدے سے مستعفی ہونے کے بعد یہ عہدہ دیا گیا ہے۔

29 جولائی کو سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر کے ذریعے اپنے استعفیٰ کا اعلان کرتے ہوئے ڈاکٹر ظفر مرزا نے کہا تھا کہ میں نے وزیراعظم کے معاون خصوصی کے عہدے سے استعفیٰ دے دیا ہے۔

انہوں نے کہا تھا کہ معاونین خصوصی کے کردار سے متعلق منفی بات چیت اور حکومت پر تنقید کے باعث استعفیٰ دینے کا فیصلہ کیا۔ بعدازاں کابینہ ڈویژن نے وزیراعظم کے معاون خصوصی ڈاکٹر ظفر مرزا استعفیٰ منظور ہونے کا نوٹیفکیشن جاری کیا تھا۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >