ایک قوم، ایک سمت، ایک پالیسی ایک نظام

ایک قوم، ایک سمت، ایک پالیسی ایک نظام

سینئر صحافی اور تجزیہ کار کامران خان کا کہنا ہے کہ پچھلےدو برسوں میں ہم نے بہت بڑے بڑے چیلجز کا سامنا کیا ہے، لیکن اللہ ہمارے ساتھ ہے ، پاکستان میں سول ملٹری ادارے مثالی اشتراک ، اتحاد اور پیار سے ایک دوسرے کے ساتھ جڑ کے کام کررہے ہیں۔

کامران خان نے مزید کہا کہ ایک بہت ہی مضبوط ٹیم کو وزیراعظم عمران خان  لیڈ کررہے ہیں او ر آرمی چیف قمر جاوید باجوہ ان کے شانہ بشانہ ہیں، پاکستان کے سول ملٹری ادارے ایک دوسرے کے ساتھ ایسے جڑے ہیں ایسے مثالی تعلقات ماضی میں کبھی دیکھنے کو نہیں ملے، اور اسی لیے پاکستان ترقی کی منزلیں تیزی سے عبور کرنے کی طرف گامزن ہے۔

کامران خان نے مزید کہا کہ ہم نے کورونا وائرس کو شکست دی اور اس کیلئے ہم نے این سی او سی کی شکل میں وہ نظام تشکیل دیا جو دنیا کیلئے ایک مثال کی حیثیت اختیار کرگیا ہے اور اس کی وجہ بھی یہی ہے کہ سول ملٹری ادارے ایک دوسرے کے ساتھ مل کر ہر مشکل میں اپنا اپنا کردار ادا کرنے میں مصروف ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ کورونا وائرس سے نمٹنے کیلئے جنرل حمود الزماں نے لیڈ کیا، ٹڈی دل سے ہماری فصلوں کو بچانے کیلئے جنرل معظم اعجاز اپنا کردار ادا کررہے ہیں، قدرتی آفات سے ملک کو محفوظ رکھنے کیلئے جنرل محمد افضل ہمہ وقت تیار ہیں، سی پیک کے منصوبوں کی تکمیل اور ان پر کام کی رفتار میں تیزی جنرل ریٹائرڈ باجوہ کی مرہون منت ہے۔

اس کے ساتھ ساتھ  واپڈا کے زیر انتظام پہلی بار ایک ڈیم بننا شروع ہوا ہےجس کی قیادت جنرل مزمل حسین کررہے ہیں، وزیراعظم عمران خان کے ہمراہ ملکی معیشت کو ترقی کی طرف گامزن کرنے والی ٹیم میں رزاق داؤد ، حفیظ شیخ ، حماد اظہر اور اسد عمر دن رات محنت کررہے ہیں۔

کامران خان نے مزید کہا کہ یہ جوسول ملٹری لیڈر شپ کے تعاون سے نظام بنا ہے جسے انگریزی میں ‘ہائبرڈ’ کہا جاتا ہے مگر میں اسے اشتراک امتزاج محبت اور اتحاد کا نظام کہوں گا یہ یقینا پاکستان کو ترقی کی طرف لے کر جائے گا۔

  • Army is a reality, so its better to take them on board wherever necessary as our existing civil institutions need 2-3 decades to clean up and start delivering in true sense or make new institutions with merit based management

  • Suprisingly all good things done by Generals either its tidi dil or constructio of Dam . We need to stop golrifying Generals and start supporting every one who is doing good . Today what country is facing is because of these Generals so better they bring whole system back and stop doing PR


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >