جہانگیر ترین، تانیہ ایدروس اور ڈیجیٹل پاکستان فاؤنڈیشن

سینئر صحافی رؤف کلاسرا کا کہنا ہے کہ تانیہ ادرس کی برطرفی سے متعلق جو ہم نے خبر بریک کی تھی اس پر جہانگیر خان ترین کا موقف سامنے آیا ہے کہ تانیہ ادروس اور جہانگیر خان ترین کا جس غیر سرکاری فاؤنڈیشن کی تشکیل میں نام آیا تھا جس کے سامنےآ نے کے بعد تانیہ ادروس کو مبینہ طور پر عہدے سے ہٹایا گیااس کی حقیقت کیا تھی۔

رؤف کلاسرا نے مزید کہا کہ جہانگیر ترین نے مجھ سے رابطہ کرکے اس پر اپنا موقف پیش کیا ہے، جہانگیر خان ترین نے تانیہ ادروس اور اپنے درمیان کسی قسم کی بزنس پروجیکٹ کی خبروں کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ یہ نیا پاکستان کے تحت بنائی جانے والی ایک فاؤنڈیشن تھی جس کا سرکاری پیسے سے کوئی تعلق نہیں تھا اور اس کا مقصد منافع بنانا نہیں تھا، اور اس منصوبے میں عمران خان کی مرضی اور منشا ء بھی شامل تھی اور وہ اس سے لاعلم نہیں تھے۔

رؤف کلاسرا کے مطابق جہانگیر خان ترین کا کہنا تھا کہ جب ڈیجیٹل پاکستان کا منصوبہ عمران خان کو پیش کیا گیا تو اس میں دنیا بھر سے آئی ٹی ایکسپرٹس کو پاکستان لاکر ڈیجیٹل دنیا میں قدم رکھا جانا تھا لیکن اس میں سب سے بڑی رکاوٹ یہ تھی کہ ان ایکسپرٹس کو دینے کیلئے بھاری تنخواہیں قومی خزانے سے نہیں نکالی جاسکتی تھیں، اسی لیے ایک فاؤنڈیشن بنائی گئی جس میں بل گیٹس فاؤنڈیشن سے پیسے آنے تھے اور ان پیسوں سے ڈیجیٹل پاکستان منصوبے کو عملی جامہ پہنایا جا نا تھا۔

رؤف کلاسرا کے مطابق جہانگیر خان ترین نے اس فاؤنڈیشن کے غیر سیاسی ہونے مگر اس سے جہانگیر خان ترین اور تانیہ ادروس کے نام جڑے ہونے سے متعلق سوال کے جواب میں کہا کہ اس منصوبے سے میرا کسی قسم کا ذاتی مفاد جڑا ہوا نہیں تھا ، میری یہ غلطی تھی مجھے اپنا نام اس فاؤنڈیشن سے نہیں جوڑنا چاہیے تھا ۔

میرے خلاف پارٹی میں ایک مضبوط لابی کام کررہی ہے وہ ہر معاملے میں عمران خان صاحب کے کان میرے خلاف بھرتے ہیں، لیکن میں تین ماہ پہلے اس فاؤنڈیشن سے بھی مستعفیٰ ہوچکا ہوں۔

  • Jahangir Tareen ny Ashir Azeem k police reforms idea ko dabaya jo Ashir ny PM IK ko b present kia tha, Youtube p link para h aur apna ik lollipop online FIR system pechly KP govt me start kia so ye bt rehny dain k wo Billgates foundation k paison sy IT experts ko Pakistan bulana chahty thy.

  • Yaar ye wohi aadmi hai jo conflict of interest ke khilaaf puchlay 10 saal se bata rahein hain. Or aaj Jahangir Tareen ki side li ja rai hai jab ke its unethical, corrupt and clear conflict of interest.

    I am not against Tania Aidrus but if she has worked in google she should follow compliance and should have imposed it in her organization.

  • treen sb party our sauth punjab ky hwaly sy aap ny party ko our imran khan ko bohat nuqsan ponchaya hy us karkunon ki nehe suni gai khair allah ki lathi byawaz hy jo tum per sahi parsi


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >