جماعت اسلامی کی کشمیر ریلی میں دھماکہ، متعدد افراد زخمی

 

کراچی کے علاقے گلشن اقبال میں جماعت اسلامی کی جانب سے یوم استحصال کشمیر کے موقع پر نکالی گئی کشمیر ریلی پر نامعلوم افراد کی جانب سے کریکر حملہ کیا گیا ہے، کریکر حملہ کے نتیجے میں ریلی میں شریک متعدد افراد زخمی ہوگئے۔

جماعت اسلامی کے ترجمان نے جماعت اسلامی کی ریلی پر ہوئے حملے کی تفصیلات بتاتے ہوئے خبر رساں ادارے کو بتایا کہ یوم استحصال کشمیر کے موقع پر جماعت اسلامی کی جانب سے نکالی گئی کشمیر ریلی جب گلشن اقبال بیت المکرم مسجد کے قریب سے گزر رہی تھی تو اچانک دھماکا ہو گیا جس میں جماعت اسلامی کے متعدد کارکنان زخمی ہوگئے جنہیں فوری طور پر قریبی ہسپتالوں میں طبی امداد کے لیے پہنچادیا گیا جبکہ ہسپتالوں میں ایمرجنسی بھی نافذ کر دی گئی ہے۔

دوسری جانب ریلی میں شریک عینی شاہدین کا خبر رساں ادارے سے گفتگو کرتے ہوئے بتانا تھا کہ ریلی کے قریب سے گزرنے والے نامعلوم موٹر سائیکل سوار نے کوئی چیز پھینکی اور پھینکتے ہی وہاں سے فرار ہو گیا، نامعلوم موٹرسائیکل کے فرار ہوتے ہی دھماکا ہوگیا،نامعلوم موٹرسائیکل سواروں کے ساتھ ایک کار بھی تھی جس کا کریکر حملے میں شیشہ ٹوٹ گیا اور وہ وہاں سے نیپا کی جانب فرار ہو گئے۔

جماعت اسلامی کی کشمیر ریلی پر ہوئے کریکر دھماکے کے فورا بعد پولیس اور رینجرز کی بھاری نفری موقع پر پہنچ گئی، کریکر دھماکے کے بعد رینجرز کے نوجوانوں نے جماعت اسلامی کے شرکاء کو مزید آگے بڑھنے سے روک دیا ۔

پولیس کی بھاری نفری کے ساتھ موقع پر پہنچے ایس ایس پی ایسٹ ساجد میر سدوزئی کا جائے وقوعہ کا معائنہ کرنے کے بعد کہنا تھا کہ کراچی کریکر حملے کے نتیجے میں 10 افراد زخمی ہوئے ہیں، ابتدائی معلومات کے مطابق ریلی کے قریب سے گزرنے والے نامعلوم موٹرسائیکل سواروں نے ریلی پر حملہ کیا ہے، ریلی کو سیکیورٹی بھی فراہم کی گئی تھی جس کی وجہ سے کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>