وزیراعظم کے دورہ لاہور کی اندرونی کہانی، اراکین اسمبلی پھٹ پڑے


وزیراعظم عمران خان کا ایک روزہ دورہ لاہور۔۔ اندرونی کہانی سامنے آگئی۔۔ اراکین اسمبلی نے شکایات کے انبار لگادئیے۔

وزیراعظم عمران خان ایک روزہ دورے پر لاہور پہنچ گئے جہاں ان سے وزیراعلی پنجاب عثمان بزدار نے ملاقات کی جس میں پنجاب کی صورتحال، ترقیاتی منصوبوں سمیت مجموعی صورتحال پر تبالہ خیال کیا گیا۔

وزیراعظم عمران خان نے پنجاب میں پٹواری اور پولیس کے محکمے میں کرپشن پر سخت اظہار برہمی کیا۔ممبران قومی اسمبلی نے وزیراعظم عمران خان کے سامنے شکایات کے انبار لگادئیے۔

اراکین اسمبلی کا کہنا تھا کہ کہ ہمارے ضلع میں ایس ایچ اوز، ڈی ایس پیز کھل کر کرپشن کررہے ہیں، ، بیوروکریسی حکومت کا ساتھ نہیں دیتی ہر جگہ مسائل ہی مسائل ہیں، اس کا نوٹس لیا جائے، ہمارے ضلع کو ترقیاتی فنڈز سے محروم رکھا گیا، متعلقہ عہدیداروں سے پوچھیں ہمارے حلقوں کو فنڈز کیوں نہیں دیتے۔

اراکین اسمبلی کا یہ بھی کہنا تھا کہ پنجاب میں مصنوعی مہنگائی بہت زیادہ ہورہی ہے۔ پنجاب میں آٹے اور چینی کی مارکیٹ میں مہنگے داموں فروخت میں محکمہ خوراک ملوث ہے۔ عوام مہنگائی سے تنگ ہے اور ہمیں موردالزام ٹھہرارہی ہے۔

جس پر وزیراعظم عمران خان نے سخت برہمی کا اظہار کیا اور کہا کہ میں جانتا ہوں کہ پولیس، پٹواری کلچر میں کرپشن ہورہی ہے، بیوروکریسی اور پولیس کا اجلاس بلایا ہے انہیں کہتا ہوں۔

عمران خان نے وزیراعلی کو اگلے ہفتے فیصل آباد جانے کا حکم دیتے ہوئے کہا کہ جو بھی اراکین اسمبلی اور کاروباری طبقے کے مسائل ہیں، ترقیاتی وانتظامی معاملات ہیں انہیں فوری طور پر حل کیا جائے۔

وزیر اعظم عمران خان نے پنجاب کے سول افسران بشمول انتظامی محکموں کے سیکریٹریز، کمشنرز، ڈپٹی کمشنرز، ریجنل پولیس افسران سے ویڈیو لنک خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کرپشن کی وجہ سے معیشت کو بہت نقصان پہنچا ہے، کرپشن ہمیشہ اوپر اور اعلیٰ طبقے سے شروع ہوتی ہے، اسی وجہ سے ہماری حکومت نے کرپشن کے خلاف جہاد شروع کیا۔

عمران خان کا مزید کہنا تھا کہ اس وقت ملک میں معاشی ترقی کے لیے سب سے اہم سیکٹر تعمیرات ہے، اس سے روزگار کے مواقع ملیں گے، آپ سے امید کرتا ہوں کہ آپ اپنے اپنے دائرہ کار میں شعبہ تعمیرات کو فروغ دینے میں اہم کردار ادا کریں گے، غریب آدمی کے مسائل حل کریں، تھانہ کلچر ختم کر دیں، آپ پر کوئی سیاسی دباؤ نہیں ہوگا، میں ہر اس افسر کے ساتھ ہوں جو میرٹ پر کام کرے گا۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >