پاکستان کا نیا سیاسی نقشہ جاری کرنا حکومت کا بہت بڑا اقدام ہے، اوریا مقبول جان

پاکستان کے نامور اور سینئر تجزیہ کار اوریا مقبول جان کا نجی ٹی وی کے پروگرام میں اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہنا تھا کہ پاکستان کا نیا سیاسی نقشہ جاری کرنا حکومت کی جانب سے بہت بڑا اقدام ہے، حکومت کے اس اقدام کے جلد ثمرات ملنے شروع ہوجائیں گے۔

نجی ٹی وی کے پروگرام میں اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے سینئر تجزیہ کار کا کہنا تھا کہ 1973 کے بعد بنگلہ دیش کے پاکستان سے علیحدہ ہونے کے بعد پاکستان کا نقشہ ایک لحاظ سے مردہ ہو چکا تھا، جسے اب پی ٹی آئی کی حکومت کی جانب سے زندہ کیا گیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان کے نقشے کے مردہ ہونے کی وجہ یہ تھی کہ ہم نے کشمیر کو دونوں ملکوں کا باہمی مسئلہ تسلیم کر لیا تھا، لیکن اب سیاسی نقشے کے جاری ہونے کے باعث کشمیر کا مسئلہ باہمی مسئلے کی حدود سے باہر نکل چکا ہے، اب جب بھی بین الاقوامی سطح پر پاکستان کے نقشے کی بات کی جائے گی تو کشمیر کا مسئلہ ضرور زیر بحث آئے گا۔

انہوں نے کہا کہ حکومت کا دوسرا بڑا اقدام بزرگ حریت رہنما سید علی گیلانی کو نشان پاکستان سے نوازنے کا فیصلہ کرنا ہے، سب سے اہم بات یہ ہے کہ گزشتہ 25 سالوں سے جن قوموں نے بھی جنگ جیتی ہے انہوں نے ڈپلومیسی کے ذریعے جنگ نہیں جیتی،بلکہ انہوں نے پراکسی سے جنگ جیتی ہے۔

اوریا مقبول جان نے کہا کہ بھارت کے زیر قبضہ کشمیر میں موجود کشمیریوں کو اس بات کا ادراک ہو گیا ہے کہ جب تک بھارت کے 22 کروڑ مسلمان کشمیریوں کا ساتھ نہیں دیں گے وہ جنگ نہیں جیت سکتے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >