حکومت کا آئی پی پیز کے ساتھ معاہدہ، بجلی کی قیمتوں میں کمی کا امکان

حکومت کا آئی پی پیز کے ساتھ معاہدہ، بجلی کی قیمتوں میں کمی کا امکان

حکومت اور خود مختار توانائی پیدا کرنے والی کمپنیوں (آئی پی پیز) اور ونڈ پاور پروڈیوسر(ڈبلیو پی پیز)کے درمیان بجلی کےنرخوں اور لیٹ پیمنٹ سرچارج کی مد میں وصول کیے جانے والے جرمانوں میں کمی کیلئے اتفاق ہوا ہے۔

حکومت کے ایک سینئر رکن نے ڈان نیوز کو بتایا کہ 2002 کی پاور پالیسی کے تحت قائم کیے گئے 12 میں سے نصف نے معاہدے کی یاداشت پر دستخط کردیئے ہیں، جبکہ باقی کمپنیوں کے ساتھ بھی معاہدہ اگلے 15 روز کے اندر طے پانے کا امکان ہے۔

وزیراعظم عمران خان نے اپنے ایک ٹویٹر پیغام میں قوم کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ” ہم توانائی کے شعبے کے بگڑے ہوئے ڈھانچے کو درست کررہے ہیں، طویل مزاکرات کے بعد حکومت نے آئی پی پیز کےسا تھ نیا معاہدہ کیا ہے جس سے توانائی کی پیداوار میں آنے والی لاگت میں کمی لائی جاسکے گی سا تھ ہی ساتھ سرکلر ڈیبٹ میں بھی کمی کی جاسکے گی، ہمارا گلا ہدف توانائی کے تقسیم کے نظام کو درست کرنا ہے”۔

یاد رہے کہ یہ معاہدہ ان آئی پی پیز کے ساتھ طے پایا ہے جنہیں پرویز مشرف کے دور حکومت یا اس کے بعد والی حکومتوں کے ادوار میں لانچ کیا گیا، 90 کی دہائی میں پیپلزپارٹی کی جانب سے دیئے گئے آئی پی پیز کے لائسنسز اسی سال منسوخ ہوجائیں گے، اسی لیے ان ساتھ معاملات طے کرنے کی کوئی ضرورت نہیں ہے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >