چیئرمین پی ٹی وی ارشد خان کی تقرری غیرقانونی قرار

اسلام آباد ہائی کورٹ نے چیئرمین پی ٹی وی ارشد خان کی تعیناتی کو غیر قانونی قراردیدیا۔

جسٹس محسن اختر کیانی نے پی ٹی وی میں غیر قانونی تعیناتیوں کے خلاف فیصلہ سنایا۔ اسلام آباد ہائی کورٹ نے23 اگست2020 کوچیئرمین، ایم ڈی پی ٹی وی اور بورڈ آف ڈائریکٹرز کے ارکان کی تعیناتی کے متعلق فیصلہ محفوظ کیا تھا۔

اسلام آبادہائیکورٹ نے فیصلے میں معروف اینکر اور چیف نیوز اینڈ کرنٹ افیئرز قطرینہ حسین اور خاور اظہر کی تقرری بھی درست قرار دیتے ہوئے کہا کہ پی ٹی وی بورڈ آف ڈائریکٹرز کے آرڈر ان فیلڈ رہیں گے اور بورڈ آف ڈائریکٹرز کے فیصلوں کو قانونی تحفظ حاصل ہوگا۔

عدالت نے پی ٹی وی بورڈ آف ڈائریکٹرز میں شامل انڈی پینڈنٹ ڈائریکٹرز کی تعیناتیاں بھی غیر قانونی قرار دیدی۔

اسلام آباد ہائیکورٹ نے ارشد خان کو آئندہ کسی عہدے پر تعینات نہ کرنے کا حکم دیتے ہوئے کہا کہ وفاقی حکومت قانون کے مطابق تعیناتیاں کرے۔

واضح رہے کہ ارشد خان2019 میں پاکستان ٹیلی ویڑن کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کے چیئرمین کا عہدہ سنبھالا تھا جبکہ وفاقی حکومت کی جانب سے عامر منظور کو ایم ڈی پی ٹی وی تعینات کیا گیا تھا۔

ارشد خان ماضی میں کئی تنازعات کی زد میں رہے ، بالخصوص جب فوادچوہدری وزیراطلاعات تھے تو ارشد خان اور فوادچوہدری کی آپس میں چپقلش کی خبریں اکثر میڈیا کی زینت بنتی رہتی تھیں۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >