لاہور میں لڑکی کو قتل اور ریپ کی دھمکیاں دینے والا ملزم ابشام اپنے والد سمیت گرفتار

تازہ ترین اطلاعات کے مطابق پولیس نے سوشل میڈیا پر لڑکی کو ہراساں اور جان سے مارنے کی دھمکیاں دینے والے ملزم ابشام اور اس کے والد عمران کو گرفتار کر لیا ہے، فیاض الحسن چوہان نے ملزم کی گرفتاری کے بعد اپنے بیان میں کہا آج سے تین دن پہلےسوشل میڈیا پر خبر وائرل ہوئی تھی، یہ ملزم ایک نوجوان بچی اور اس کے اہل خانہ کو دھمکیاں دیتا ہے۔

صوبائی وزیر نے کہا کہ آج اگر اس درندے کو نشان عبرت نہ بنایا تو کل یہ کسی اور کی زندگی برباد کرے گا۔

فیاض الحسن نے یہ بھی بتایا کہ اس لڑکی کے والد نے پہلے منع کیا پھر تفصیلی بات کے بعد راضی ہوئے، لڑکی کے والد نے بتایا کہ ایک سال سے زائد کا عرصہ گزر چکا ہے پہلے ایف آئی اے کو درخواست دی مگر ایف آئی اے نے کارروائی نہیں کی انہوں نے کہا کہ ایسے معاملات پر ہم سب لوگوں کو اپنا رویہ ٹھیک کرنا چاہیے۔

انہوں نے کہا کہ وزیراعلیٰ پنجاب کی ہدایت تھی کہ 24 گھنٹے میں ملزمان گرفتار کریں، سی سی پی او نے 10گھنٹوں میں باپ بیٹے کو گرفتار کر لیا، ملزمان کو گرفتار کرنے پر اےایس پی رضا تنویر کو خراج تحسین پیش کرتا ہوں۔

ملزم ابشام نے سوشل میڈیا پرلڑکی کو جان سے مارنے کی دھمکیاں دی تھیں ، لڑکی کو دھمکیاں دینے پر ملزم کے خلاف مقدمہ درج ہوا تھا تاہم ملزم کو گرفتار نہ کیا جا سکا تھا گزشتہ روز فیاض الحسن چوہان نے سی سی پی او لاہور کو ملزمان کوپکڑنے کی ہدایت دی تھی۔

یاد رہے کہ لاہور میں طالبہ نے ریپ اور قتل کی دھمکیاں دینے والے ابشام نامی لڑکے کو سوشل میڈیا پر بے نقاب کیا تھا ، متاثرہ لڑکی کا موقف تھا کہ ابشام 2016 سے تنگ کررہا ہے، مقدمہ درج ہونے کے باوجود پولیس نے کوئی کارروائی نہیں کی۔ اس بیچاری لڑکی نے سوشل میڈیا کا سہارا لے کر ملزم کی دھمکیوں کے سکرین شاٹس اور ویڈیو شیئر کیں، جس کے بعد سوشل میڈیا پرابشام کو حوالات میں بند کرو کا ہیش ٹیگ ٹاپ ٹرینڈ کرنے لگا۔

اس سے قبل 14 ستمبر کو بھی ہمارے پلیٹ فارم سے اس ابشام نامی درندے کی درندگی کے خلاف آواز اٹھائی گئی تھی، تاہم یہ امر باعث مسرت ہے کہ ملزم اب جیل میں ہے اور حکام کی جانب سے بھی اسے سزا دلانے کی یقین دہانی کرائی گئی ہے۔ ہمیں ایسے مواقعوں پر پولیس کا اعتماد بحال کرنے کے لیے ان کی کاوشوں کو بھی سراہنا چاہیے۔

  • Well done Punjab Police, Sab say pehlay to is larkay k baap ki chitrol karo jis ki waja say yeh oqat say bahir howa. Usk bad iski hadiyan tori jayen takay isay ilam ho beta tera baap ka raj nahin k tu jo merzi karta phiray !

  • Is ke baap haramzaday ko pehlay lohay ki seekh garem kerkay iski G main ghusao, phir iss say poocho tu kidher ka badmaash hay aur kaisay harami ko paida kiy a hay . Dono baap baitoon ko 10 saal ke liay jail main dalo.

  • پنجاب پولیس کرپٹ حکمرانوں نونی مافیاز لیگ پنجاب کے نو سر بازوں ٹھگوں کے چنگل سے آزاد ہو گئی ھے اب پنجاب پولیس دیانتدار خودار پی ٹی آئی حکومت کے ساتھ ھے امید ھے پنجاب کی پولیس اپنی کارکردگی سے عوام کا اعتماد حاصل کریں گے

  • یہ بےغیرت کل کا عابد ملہی ( موٹر وے کیس وال ) تھا اسے
    گرفتار کرنا ایک خوش آئند اور احسن کام ہے
    مگر اسے کچھ دنوں کے بعد پولیس اور عدالت نے پیسے لے
    کر چھوڑ دیا تو پھر یہ عابد اور شفقت وغیرہ سے بھی بڑا
    مجرم اور ریپسٹ بنے گا جس سے کسی کی بھی عزت اور
    جان محفوظ نہیں رہے گی

  • Just wondering under what law, this idiot’s father is arrested? This is an unfortunate situation … same as the Motorway’s main culprit’s Dad and wife being arrested. You only arrest the relatives if they are either involved in a crime or somehow abetted in a crime. We should be catching the real culprits rich or poor … powerful or weak … but definitely not their relatives.

  • اسلام و علیکم
    تمام پاکستانی قوم کے سامنے اس مسلےکا ایک حل ھے اور مجھے بھت امید ھے یہ اس کے لاگو کرنے سے یہ سلسلہ کنٹرول ھو سکتا ھے

  • یہ ہر جائز کام کے لئے وزیراعلی کو نوٹس کیوں لینا پڑتا ہے۔۔۔
    کیا پولیس انتظار میں رہتی ہے کہ کوئی اعلی حکام نوٹس لے۔۔
    کیا پولیس یہ کام پہلے نہیں کر سکتی تھی۔۔
    ہر محکمے میں اوپر والے لوگ ٹھیک اور چھوٹا طبقہ بغیرت ہوتا ہے۔۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >