اراکین قومی اسمبلی نے کتنا ٹیکس دیا ؟ ٹیکس ڈائریکٹری جاری

اراکین قومی اسمبلی نے کتنا ٹیکس دیا ،ایف بی آر نے پارلیمنٹرینز کی سال دوہزار اٹھارہ کی ٹیکس ڈائریکٹری جاری کردی،ایف بی آر کے مطابق وزیراعظم عمران خان نےدو لاکھ بیاسی ہزارچار سواننچاس روپے ٹیکس دیا،

شاہ محمود قریشی نے ایک لاکھ تیراسی ہزار نوسو روپےجبکہ اسد عمر نےتریپن لاکھ چھیالیس ہزار روپے ٹیکس جمع کرایا۔۔ فیصل واوڈا، نورالحق قادری، زرتاج گل ، زین قریشی اور راشد شفیق نے زیرو ٹیکس دیا

قائد حزب اختلاف شہبازشریف97 لاکھ 30 ہزار595 روپے،آصف زرداری نے28 لاکھ 89 ہزار455 ،بلاول بھٹوزرداری نے 2لاکھ 94 ہزار117روپے ٹیکس ادا کیا،وفاقی وزراء میں عمرایوب 2کروڑ60 لاکھ 55 ہزار کے ساتھ سرفہرست ، پرویز خٹک 18لاکھ،26ہزار،غلام سرور10لاکھ46ہزار،مراد سعید 3لاکھ 74ہزار، شبلی فراز3لاکھ67 ہزار،شاہ محمود قریشی نے1لاکھ 83 ہزار،شہر یارآفریدی نے 1لاکھ83ہزار اور شیخ رشید نے 5 لاکھ 79 ہزارروپے ٹیکس ادا کیا۔۔۔

سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے2018 میں 24کروڑ13لاکھ29ہزار، حمزہ شہباز نے87 لاکھ 5 ہزار، خواجہ آصف 43لاکھ 71ہزار، رانا ثناء اللہ 13لاکھ88ہزار، ایاز صادق 3لاکھ85ہزار اور احسن اقبال نے 3لاکھ 57ہزارکا ٹیکس ادا کیا، تفصیلات کے مطابق 46 اراکین قومی اسمبلی نے زیرو ٹیکس ادا کیا، جن میں فیصل واوڈا، نورالحق قادری، زرتاج گل ، زین قریشی اور راشد شفیق شامل ہیں۔

سال 2018 میں 98 سینیٹرز نے ٹیکس جمع کروائے، سینیٹر فروغ نسیم 3 کروڑ 51لاکھ 35 ہزار کے ساتھ سرفہرست ہیں، سینیٹر طلحہ محمود نے 2 کروڑ 92 لاکھ ، سینیٹرتاج آفریدی 2 کروڑ81 لاکھ ، ساجد طوری 1 کروڑ 70 لاکھ اورسینیٹر اعظم سواتی نے 5 لاکھ 90 ہزارٹیکس ادا کیا ، شیری رحمان 15 لاکھ 12ہزار،سراج الحق نے 2 لاکھ 16ہزار اور مولا بخش چانڈیو5ہزار632 ٹیکس دیے، سینیٹ کے تین سینیٹرز نے زیرو ٹیکس دیا، جس میں فیصل جاوید ، شمیم آفریدی اور راجا مقبول شامل ہیں۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >