ایک اور خاتون سے بچوں اور خاوند کے سامنے جنسی زیادتی، پولیس کچھ نہ کر سکی

سرگودھا کے نواحی علاقے مڈھ رانجھا گھلا پور میں 4 مسلح ڈاکو گھر میں ڈکیتی کی واردات کے دوران اہل خانہ کو یرغمال بنا کر اسلحے کے زور پر خاتون سے 2 گھنٹے تک زیادتی کرتے رہے۔

تفصیلات کے مطابق گھلا پور کی رہائشی متاثرہ خاتون اپنے خاندان کے ہمراہ ڈیرے پر سوئی ہوئی تھی کہ چار ڈاکو گھر میں ڈکیتی کی نیت سے داخل ہوئے اور پورے خاندان کو یرغمال بنا کر لوٹ مار کی۔ چاروں ڈاکوؤں نے اسی دوران خاوند اور بچوں پر بدترین تشدد کیا اور اس کے بعد خاتون کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنایا۔

حسب روایت پولیس کو اطلاع دینے کے4 گھنٹے بعد پولیس جائے وقوعہ پر پہنچی اور اجتماعی زیادتی کے واقعہ کو دبانے کی کوشش کرنے لگی۔ اہل علاقہ کے احتجاج پر پولیس نے 4 کے بجائے 2 ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کیا جن میں سے ایک ملزم کو نامزد جبکہ دوسرے کو نامعلوم لکھا گیا ہے۔

ڈی پی او سرگودھا فیصل گلزار متاثرہ خاندان کے گھر گئے جہاں انہوں نے متاثرین سے ملاقات کے بعد یقین دہانی کرائی کہ ملزمان کو جلد گرفتار کر لیا جائے گا۔ انہوں نے متاثرین کو انصاف دلانے کی بھی یقین دہانی کرائی۔

  • سرگودھا کے نواحی علاقے مڈھ رانجھا گھلا پور میں 4 مسلح ڈاکو گھر میں ڈکیتی کی واردات کے دوران اہل خانہ کو یرغمال بنا کر اسلحے کے زور پر خاتون سے 2 گھنٹے تک زیادتی کرتے رہے۔

  • یہ ظلم گزشتہ 30 سالوں سے پنجاب میں ہو رہا ھے لیکن پہلے غریب لوگ رپورٹ نہیں کرتے تھے اب لوگوں کو انصاف کی توقع ھے اور لوگ ان درندوں کے خلاف رپورٹ درج کرا رھے ھیں امید ھے حکومت وقت جلد از جلد اس گھنائونے جرم کو ہمیشہ کے لیئے سخت سے سخت اقدامات اٹھانے گی


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >