پاکستان میں انصاف لینا باقی ممالک سے مختلف ہے،امریکی صحافی سنتھیا رچی

امریکی شہری و بلاگر سنتھیا ڈی رچی کہتی ہیں کہ پاکستان میں زیادتی کی شکار خاتون کو ہی شک کی نگاہوں سے دیکھا جاتا ہے، اس ملک میں انصاف لینا باقی ممالک سے مختلف ہے،چیلنجنگ صورتِ حال آپ کو اور مضبوط بنا دیتی ہے۔

سنتھیا ڈی رچی اپنے خلاف رہنما پیپلز پارٹی سینیٹر رحمان ملک کے قذف کے مقدمے کی سماعت کے لیے ڈسٹرکٹ کورٹ اسلام آباد میں پیش ہوئیں، جہاں انہوں نے نجی ٹی وی سے غیر رسمی گفتگو میں کہا کہ مجھے کیوں ڈی پورٹ کرنے کا کہا جاتا ہے،اگر میں غلط ہوں تو ثابت کیا جائے۔

سنتھیا نے کہا کہ میں نے اب تک جج سے ڈائریکٹ بات نہیں کی مگر میں کرنا چاہوں گی، پاکستان میں زیادتی کے حوالے سے کھلم کھلا بات کر رہی ہوں،آج سے پہلے ان موضوعات پر پاکستان میں بات نہیں کی جاتی تھی،

غیرت، عزت اور شرم کے باعث عورتیں زیادتی پر بات نہیں کرتیں،رحمان ملک، مخدوم شہاب اور پیپلز پارٹی کی جانب سے مفاہمت کا کوئی پیغام نہیں ملا، حال ہی میں موبائل اور ٹویٹر پر ہراساں کرنے والے میسیج موصول ہوئے ہیں،سابق وزیرِ داخلہ رحمان ملک نے کمپلینٹ فائل کی ہے، اب وہ کیوں پیشیوں پر غیر حاضر ہیں؟

دوسری جانب سنتھیا رچی کے وکیل عمران فیروز کا کہنا تھا کہ عدالت کو بتایا ہے کہ چوتھی سماعت ہے اور رحمان ملک کی جانب سے کوئی پیش نہیں ہو رہا،رحمان ملک کی جانب سے کوئی وکیل بھی پیش نہیں ہو رہا،ہر بار کہا جاتا ہے وہ میسر نہیں۔

عدالت نے اگلی پیشی پر رحمان ملک کی جانب سے وکیل کو لازمی پیش ہونے کا حکم دیا،عدالت نے کہا ہے کہ اگلی پیشی پر دونوں پارٹیاں بحث کریں گی، کیس کی آئندہ سماعت دس اکتوبر کو ہے، بحث کے بعد عدالت فیصلہ سنائے گی۔

  • Amreeki Sahafi? She is not a journalist you dumb ass, inferiority complex ridden Pakistanis. She is a mere tourist who is pissing on your heads by using her white privilege. I swear I never saw a nation as self disrespecting as Pakistanis.


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >