اشتہاری شہباز بھنڈر محسن رانجھا کے ڈیرے سے برآمد ہوا تھا، سی سی پی او عمر شیخ

قومی اسمبلی قائمہ کمیٹی کے دوران سی سی پی او لاہور عمر شیخ اور ن لیگی رکن اسمبلی محسن رانجھا کے درمیان تلخ کلامی

گزشتہ روز قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے قانون و انصاف نے لاہور سیالکوٹ موٹر وے واقعہ پر شدید تشویش کااظہا رکرتے ہوئے کہا کہ واقعہ نے پوری قوم کو شر مندہ کر دیا ۔

اجلاس میں سی سی پی او لاہور عمر شیخ نے سیاستدانوں پر ڈ کیتوں اور جرائم پیشہ افراد کی سرپرستی کا الزام لگادیا جس پر رکن اسمبلی محسن رانجھا اور سی سی پی او لاہور کے درمیان تلخ کلامی ہوئی ،

سی سی پی او عمر شیخ نے کہاکہ شہباز بھنڈر محسن رانجھا کے ڈیرے سے برآمد ہوا ،محسن رانجھا نے کہاکہ آپ غلط بات کررہے ہیں، آپ خود ایڈیشنل آئی جی کی تعیناتی کی سفارش کے لئے میرے پاس آئے تھے ، میں نے وزیرا علیٰ سے آپ کی سفارش کی اور آج آپ مجھ پر الزام لگاتے ہیں ۔

اس موقع پر محسن شاہنواز اور پیپلز پارٹی کی رکن نفیسہ شاہ کے درمیان تلخ کلامی ہوگئی جسے چیئرمین کمیٹی ریاض فتیانہ نے کاروائی سے حذف کردیا جب کہ سی سی پی او عمر شیخ نے محسن شاہنواز کا نام لینے پر معذرت کرلی۔

سی سی پی او لاہور عمر شیخ نے کہا کہ پراسیکیوشن جنرل سے 2 بہتر پراسیکیوٹر مانگے ہیں ،موٹروے زیادتی کیس پراسیکیوشن کا رواں سال کا بڑا کیس ہو گا، عابد کے پیچھے ہماری 25 ٹیمیں سائیٹیفک طریقے سے کام کررہی ہیں ۔

اجلاس کی صدارت چیئرمین کمیٹی ریاض فتیانہ نے کی ،اجلاس میں ایڈیشنل سیکرٹری مواصلات، آئی جی موٹروے اور سی سی پی او عمر شیخ کے علاوہ سابق آئی جی و سابق آئی بی چیف ڈاکٹر شعیب سڈل اور سابق آئی جی افضل شگری بطور ماہرین موجود تھے۔

کمیٹی ار کان نے کہا موٹروے واقعہ اور اس پر ریمارکس نے پوری قوم کو شرمندہ کردیا ، ریاض فتیانہ نے کہاکہ بتائیں پولیس انتظامات کے بغیر موٹروے کیوں کھولی۔

آئی جی موٹر وے کلیم امام نے کہاکہ19لنک موٹروے روڈز ایسی ہیں جن کا کنٹرول تو ہمیں دے دیا گیا ہے مگر پولیس بھرتی کی اجازت نہیں دی گئی۔

احسان اللہ ٹوانہ نے کہا خوشاب میں 75سالہ خاتون کے ساتھ 24 سالہ نوجوان نے گھر میں گھس زیادتی کی، اس خاتون کی ٹانگیں توڑ دیں، پیٹ چاک کردیا ، ہم کس عذاب سے گزر رہے ہیں۔

محسن شاہنواز رانجھا نے کہاکہ جس دن پولیس اور ہم سوچ لیں گے کہ یہ ہماری بہن بیٹی ہے تو ریپ نہیں ہوگا ۔

اس موقع پر عالیہ کامران نے کہاکہ کچھ سال پہلے پمز میں ایک معذور خاتون ملازم سے زیادتی ہوئی مگر کیس دبا دیا گیا۔

واضح رہے کہ شہباز بھنڈر بہاؤلپور کا نامی گرامی ڈان اور اشتہاری تھا جو کئی قتل اور دیگر وارداتوں میں ملوث تھا، شہباز بھنڈر اور محسن رانجھا سے متعلق دعویٰ کیاجارہا ہے کہ شہباز بھنڈر کو محسن رانجھا کے ڈیرے سے ہی گرفتار کیا گیا تھا۔

  • There is no doubt politicians patronize criminals……look at politicians from Murree, kahota,AJK, Hazara and Swat…….all support timbre mafia…….. i know in one area, some men from a particular tribe were caught red handed and a case was registered in a police stations in the area……local mpa pressed for retraction of the case and sided with the thieves who were his own clan…….What works in Pakistan is badmashi of the majority……country has gone to dogs due to these corrupt people


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >