سابق ایس ایس پی مفخر عدیل نے شہباز تتلہ کو کیسے قتل کیا؟ لرزہ خیز انکشافات

سابق ایس ایس پی مفخر عدیل اور اسد بھٹی نے شہباز تتلہ کو کیسے قتل کیا؟ لرزہ خیز انکشافات سامنے آگئے

پولیس نے شہباز تتلہ قتل کیس میں سابق ایس ایس پی مفخر عدیل سمیت دیگر کیخلاف عبوری چالان عدالت میں جمع کرا دیا۔

چالان متعلقہ ٹرائل کورٹ میں بھیجنے کے لیے سیشن جج لاہور کو ارسال کر دیا گیا، عبوری چالان میں ملزمان ایس ایس پی مفخر عدیل، اسد سرور اور عرفان علی کو نامزد کیا گیا ہے۔چالان میں 25 ثبوتوں کا ذکر کیا گیا ہے، سیف سٹی کیمرے کی سی ڈی کو فائل کا حصہ بنایا گیا ہے۔

چالان کے مطابق مفخر عدیل اور اسد بھٹی نے شہباز تتلہ کوکلمہ چوک سے اغواکیا،ملزمان نے مشروب میں نشہ آور چیز پلائی جس سے کچھ دیر بعد شہباز تتلہ بے ہوش ہو گئے ۔

مفخر عدیل نے شہباز تتلا کے منہ اور ناک پر ٹیپ لگائی اور منہ پر تکیہ رکھ کر بیٹھ گئے جس سے شہباز تتلہ کی سانسیں رک گئیں اور ان کی موت ہو گئی ۔

چالان میں کہا گیا ہے کہ ملزمان نے شہباز تتلا کی لاش کو نیلے ڈرم میں سر کے بل ڈال دیا، بعدازاں ڈرم میں تیزاب ڈال دیا، تیزاب ملزم عرفان نے لا کر دیا، شہباز تتلا کی لاش کچھ دیر میں محلول بن گئی جسے گھر کے گٹر میں بہا دیا گیا۔

چالان کے مطابق ملزمان نے ڈرم، تیزاب کی کین، کپڑے، تکیہ، تولیہ اور دیگر سامان گجومتہ نالہ میں پھینک دیا تھا۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >