ساہیوال: پی ٹی آئی رہنما کی غنڈہ گردی، خاتون سرکاری ملازم پر تھپڑوں کی بارش کردی

ساہیوال : تحریک انصاف کے رہنما نوید اسلم آپے سے باہر۔۔ جنرل پوسٹ آفس میں سینر پوسٹ ماسٹر صوفیہ قاسم پر تھپڑوں کی برسات کر دی

ساہیوال جنرل پوسٹ آفس کے ورکر کی ہڑتال غنڈہ گردی کے خلاف احتجاج اور سینئر پوسٹماسٹر صوفیہ قاسم سے اظہاریکجہتی۔۔ عملے نے اس واقعہ کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے پوسٹ آفس بند کردیا۔

تھانہ سٹی پولیس نے پی ٹی رہنما نوید اسلم کےخلاف تشدد کا شکار ہونیوالی خاتون صوفیہ قاسم کی مدعیت میں ایف آئی آر درج کرلی اور ملزم نوید اسلم کو حراست میں لے لیا۔

تشدد کا شکار ہونیوالی سینئر پوسٹ ماسٹر صوفیہ قاسم نے کہا کہ نوید اسلم نامی ایک شخص میرے کمرے میں داخل ہوا، اس نے آتے ہی بغیر کوئی وجہ بتائے، بغیر مجھے مخاطب کئے اس نے مجھے تھپڑمارنا شروع کردئیے۔ اس نے نہ شکایت بتائی ، نہ مسئلہ بتایا بلکہ آتے ہی تھپڑمارنا اور گالیاں دینا شروع کردیں۔

صوفیہ قاسم کا کہنا تھا کہ مجھے اسکے آنے کا پتہ ہی تب چلا جب اس نے میرے منہ پر تھپڑ مارا، اسکے بعد اس نے مجھے بازو سے پکڑا، مجھے گھسیٹا ہے اور مجھے دھمکیاں دینا شروع کردیں کہ میں تمہیں جان سے ماردوں گا، میں تمہیں دیکھ لوں گا

صوفیہ قاسم کے مطابق وہ باقاعدہ دندناتے ہوئے میرے دفتر میں کہہ رہا تھا کہ میں پی ٹی آئی کا ورکر ہوں، میرا کوئی کچھ نہیں بگاڑ سکتا، میں ابھی بزدار صاحب کو فون کرتا ہوں، میں ابھی تم سب کو اٹھوادوں گا۔ اسکے پاس اسلحہ بھی تھا

صوفیہ قاسم کا کہنا تھا کہ یہ واقعہ دن دیہاڑے ہوا جب ایک شخص دفتر میں گھستا ہے، ایک گورنمنٹ آفیسر جو ایک خاتون ہے اسے تھپڑمارتا ہے، اسکی عزت خراب کرتا ہے وہ اگلے دن ہی ضمانت پر رہا ہوجاتا ہے۔ پولیس نے ایف آئی آر میں ایسی دفعات شامل کیں جو قابل ضمانت تھیں اور وہ اگلے دن ضمانت پر گھر پر تھا۔

  • Kya is khaatoon worker na yh nahi btaya k wo shakhs is tashadud ki wja kya bta kr gya th?
    Esi kya baat thi k usna Yh sab kiya?
    Jahan ap yh news bta raha to iski waja b btana apka farz ha…
    Beherhaal waja chaaha jo b ho harkat bohat ghalat ki Or iski saza isa milni chahya har soorat!!!!

    • whatever the reason may be, you are not allowed to hit a women. If you think that you are allowed to hit a women with a valid reason than you are a Jahil, Wahshi and darinda and pose a threat to public.
      If you have a valid reason than complain it to higher authorities. Go to court.

  • iis ke chere se to anhen lagta ke iis ko thapar maare gai hain koi eik to nishan ho iiis ke chere per. Original khanai yeh hogi ke yeh koi PLMN ki badbo dard aurat hogi jis ko sifarish se job mili hogi kuch ata jata hoga nahen aur iis admi ne jawab main kuch na kuch badtameezi ki hogi yeh to zaroro howa hoga but thapper marne wali baat hazam nahen hoti jaab ke yeh bilkul hasash bashash bethi hai


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >