اقوام متحدہ میں تقریر پر وزیراعظم کا اعزاز، امریکی صدر کو بھی پیچھے چھوڑ دیا

وزیر اعظم عمران خان نے ویوور شپ میں تمام عالمی رہنماؤں کو پیچھے چھوڑ دیا، وہ مسلسل دوسری بار اقوام متحدہ میں زیادہ سنے اور دیکھے جانے والے سربراہ بن گئے ہیں۔ اقوام متحدہ کے آفیشل یوٹیوب چینل پر وزیر اعظم کی حالیہ تقریر ایک لاکھ 70 ہزار سے زائد لوگ دیکھ چکے ہیں۔ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور بھارتی وزیر اعظم مودی بھی ویوور شپ میں عمران خان سے پیچھے ہیں۔

پاکستانی وزیراعظم عمران خان کی گزشتہ سال کی تقریر کو بھی اب تک 28 لاکھ سے زائد افراد دیکھ چکے ہیں۔ رواں برس امریکی صدر ٹرمپ ایک لاکھ 37 ہزار ویور شپ کے ساتھ دوسرے نمبر پر ہیں، انڈونیشیا کے صدر جوکو ودودو 94 ہزار ویوز کے ساتھ ٹاپ 3 میں شامل ہیں۔

ایرانی صدر حسن روحانی کی تقریر 67 ہزار، بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی کی تقریر 62 ہزار، روسی صدر کی تقریر 59 ہزار، چینی صدر کی تقریر 44 ہزار اور افغان صدر اشرف غنی کی تقریر کو صرف 8 ہزار لوگوں نے دیکھا۔

پاکستان اور بھارت کے درمیان رائٹ آف رپلائی بھی دنیا کی توجہ کا مرکز رہا، پاکستانی سفیر کا رائٹ آف رپلائی 88 ہزار مرتبہ دیکھا گیا، بھارتی سفیر کی رائٹ آف رپلائی کی تقریر کو 60 ہزار افراد نے دیکھا۔

وزیراعظم عمران خان کی گزشتہ سال کی تقریر

  • Social media record tu tor dya lekin awam ko ju 2 waqt ki roti milti the woh ab ek waqt ki b mushkil hu gaye he
    Imran khan ko sirf yeh pata he k nawaz sharif pe konsa case katna reh gaya he
    Choti choti bachiyon ka rape hu raha he ladies ka rape hu raha he khan sahab ko kuch nahi pata mulk me kya hu raha he bus nawaz group ko nahi chorna chahy sara mulk bhook se mar jaye aflas se mar jaye aj ghareeb ko roti nahi mil rahe q k mehngai asman se batein kar rahe he or ju daal ata mil jata tha ab woh b khareednay ki jurrat nahi yeh he naya pakistan tu hamein purana hi theek tha mehngai tu nahi the na jase b the awam ko roti mil rahe the
    Imran khan ko ya pata he k social media pe views kittne hu or nawaz sharif pe cases kitny reh gaye baqi awam jaye jahanum me.
    Imran khan k yehi 5 saal hein enhu ne awam ko buhat dukh dye bhook de buhat shukria naya pakistan dene ka bhook k sath hamein purana kafi he

    • او عقل کی دشمن باجی.. پانچ سال ابھی نہیں ہوۓ. آپکا رازق عمران خان نہیں ہے. اس سے صرف اس بات کی امید رکھیں کی ایمانداری اور محنت سے کام کرے. رہی پرانے پاکستان کی بات تو ایسا ہی ہے جیسے ماں باپ کے گزر جانے کے بعد رشتہ دار بچوں کی کفالت انہیں کے گھر کا سامان بیچ کر کریں اور ان کے جوان ہونے پر جسم فروشی پر مجبور کریں کہ بیچنے کو کچھ نہیں رہا. نواز زرداری نے ائرپورٹ، ریڈیو سٹیشن سڑکوں کو گروی رکھ کر قرضے سے اپنی جیبیں بھریں اور جو انکے منہ سے گرا وہ عوام تک پہنچتا رہا اب یہ ایٹمی اثاثوں کو گروی رکھ کر پاکستان کی عصمت فروشی کے خواہشمند تھے. براۓ مہربانی جاگ جائیں. رازق سے راضی رہیں اور محنت کریں


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >