پولیس کو دھمکا کر دباؤ ڈالنے کے ویڈیو ثبوت موجود ہیں، مرتضی وہاب

ترجمان سندھ حکومت اور پیپلزپارٹی کے رہنما مرتضیٰ وہاب نے کہا ہے کہ کیپٹن (ر) صفدر کو گرفتار کرنے کیلئے پولیس کو دھمکیاں دی گئیں، ان پر دباؤ ڈالا گیا ان سارے واقعات کی ویڈیوز موجود ہیں۔

کراچی میں میڈیا نمائندوں سے بات کرتے ہوئے مرتضیٰ وہاب نے کہا کہ وزیراعلی سندھ نے واقعے کی تحقیقات کیلئے کمیٹی تشکیل دیدی ہے، کمیٹی کے اراکین کا اعلان بھی آج کردیں گے، تفتیش میں تمام حقیقت کھل کر سامنے آئے گی کہ کیسے ایک تحریک انصاف کے ایک وفاقی وزیر اور دیگر اراکین نے پولیس کو دھمکایا۔

انہوں نے حکومتی جماعت تحریک انصاف پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ پی ٹی آئی پنجاب میں پولیس کو اپنے سیاسی مقاصد کیلئے استعمال کررہی ہے، ہم پولیس کو آزادانہ طریقے سے کام کرنے دینے کے حامی ہیں، ہم اپنے اداروں کے ساتھ کھڑے ہیں۔

یاد رہے کہ گزشتہ دنوں پی ڈی ایم کے کراچی میں جلسے میں بلاول بھٹو کی دعوت پر کراچی جانے والے مسلم لیگ ن کے رہنماؤں میں سے کیپٹن (ر) صفدر کو سندھ پولیس نے علی الصبح ہوٹل کے کمرے کا دروازہ توڑ کر گرفتار کرلیا تھا جس کے بعد سندھ حکومت اور پیپلزپارٹی شدید دباؤ کا شکار ہوگئی تھی۔

  • یہ چوزہ ان گواہوں کی بات کر رہا ہے جن کو دھمکا کے زرداری ڈاکو
    کے کیسز کلیر کرواے اس مالشیا نما کمی کمین ای جی نے
    اب بلو کھسرا مردوں کی جیل میں ظلم برداشت کرانے کو تیار ہو رہا ہے

  • چلو اگر پولیس پر دباؤ ڈالا بھی گیا ہے تو ان سے کوئی غلط کام تو نہیں کروایا گیا؟ صفدر نے قانون تورا تو اسے گرفتار کرنے کا کہا گیا …اب اس میں کیا


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >