شہباز شریف کی بیٹی کو اشتہاری قرار دینے کی کارروائی کا آغاز

شہباز شریف کی بیٹی کو اشتہاری قرار دینے کی کارروائی کا آغاز

شہباز شریف کی بیٹی کو اشتہاری قرار دینے کی کارروائی کا آغاز، نوٹس گھر اور عدالت کے باہر چسپاں

سابق وزیراعلی پنجاب میاں شہباز شریف کی بیٹی رابعہ عمران کو منی لانڈرنگ اور آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس میں عدم پیشی پر عدالت کی جانب سے اشتہاری قرار دیئے جانے کی کارروائی کا آغاز ہوگیا ہے۔

خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف کی بیٹی رابعہ عمران کو احتساب عدالت نے منی لانڈرنگ اور آمدن سے زائد اثاثہ جات ریفرنس میں متعدد بار طلب کیا ، ان کی عدم پیشی پر ان کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری بھی جاری کیے گئے مگر ان کے بیرون ملک مقیم ہونے کی وجہ سے وارنٹس پر عمل درآمد نہ ہوسکا۔

جس کے بعد احتساب عدالت کے جج جواد الحسن نے رابعہ عمران کو اشتہاری قرار دینے کا حکم دیا تھا ، تفتیشی افسر نے عدالت کو آگاہ کیا کہ اشتہاری قرار دیئے جانے کی کارروائی کا آغاز کردیا گیا ہے اور نوٹس رابعہ عمران کے گھر کے باہر، عدالت کے باہر اور دیگر مقامات پر چسپاں کردیئے گئے ہیں۔

واضح ہو کہ شہباز شریف اور ان کے خاندان کے افراد کے خلاف منی لانڈرنگ اور اثاثہ جات ریفرنس میں نیب نے شہباز شریف کو گرفتار کررکھا ہے ، جبکہ ان کے صاحبزادے حمزہ شہباز پہلے سے ہی نیب کی حراست میں ہیں تاہم نیب کے مطابق ریفرنس میں نامزد دیگر ملزمان سلمان شہباز، نصرت شہباز، رابعہ عمران اور جویریہ علی نے نیب کے سامنے پیش ہوکر اپنے بیان ریکارڈ نہیں کروائے ، عدالت کی جانب سے سلمان شہباز اور ہارون یوسف کے ناقابل ضمانت وارنٹس گرفتاری پہلے ہی جاری ہوچکے ہیں۔

  • جب تک یہ گوامنڈیا خاندان عبرت کا نشان نہیں بنے گا پاکستان کی سیاست صیح راستے پر گامزن نہیں ہوسکتی۔ اس چور خاندان نے آپنی خواتین کو بھی پاکستان کی غریب عوام کی دولت کو لوٹ مار کے لئے استعمال کیا۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >