نواز شریف کی وزیراعظم عمران خان کو جیل میں ڈالنے کی دھمکی

 

سینئر صحافی و تجزیہ کار رؤف کلاسرا کا کہنا ہے کہ پی ڈی ایم کے کوئٹہ جلسے میں جو تقاریر ہوئیں وہ گوجرانوالہ اور کراچی کے جلسوں کی تقاریر سے زیادہ خطرناک تھیں۔

اپنے ویڈیو بلاگ میں رؤف کلاسرا نے کہا کہ جس قسم کی تقاریر کوئٹہ میں ہوئیں ہوسکتا ہے آنے والے دنوں میں پی ڈی ایم کی حامی سیاسی جماعتیں ہی اس بیانیے سے دوری اختیار کرلیں، خصوصاً پیپلزپارٹی کیلئے آنے والے دنوں میں فیصلہ کرنا اہم ہوگا۔

رؤف کلاسرا نے کہا کہ بلوچستان کا سب سے بڑا مسئلہ لاپتہ افراد کا ہے اور اسی لیے بلاول بھٹو نے اپنی تقریر میں عمران خان کی حکومت کی ناکامیوں کے ساتھ ساتھ لاپتہ افراد کے معاملے کو زیادہ اہمیت دی، اسی طرح مریم نواز نے بھی اپنی تقریر میں لاپتہ افراد سے متعلق بار بار سوال اٹھایا، اس کا مقصد اسٹیبلیشمنٹ پر دباؤ بڑھانا تھا۔

رؤف کلاسرا نے کہا کہ جلسے کی بعض تقاریر میں اتنی سخت باتیں کی گئیں کہ ٹی وی چینلز کی جانب سے بہت بار تقریر کےد وران آواز کو بند کیا گیا اور بعض چینلز نے تقریر کو آف ایئر کردیا ، یہ ایک ماحول ہے کہ سیاسی درجہ حرارت میں اضافہ ہونا شروع ہوگیا ہے، اسی لیےدیکھنا ہوگا کہ اگلے جلسوں کو ٹی وی چینلز کی جانب سے لائیو کوریج کی اجازت ملتی ہے یا نہیں۔

انہوں نے کہا کہ جلسے میں ہونے والی چند تقاریر متنازعہ صورت اختیار کرگئی ہیں، ان میں سے پہلی تقریر اویس نورانی کی تھی جس میں انہوں نے آزاد بلوچستان کی بات کی ان کے اس بیان پر سوشل میڈیا پر ایک بحث شروع ہوگئی ہے اور آنے والے دنوں میں یہ بیان اویس نورانی اور پی ڈی ایم کیلئے مشکلات کھڑی کرے گا۔

رؤف کلاسرا نے کہا کہ دوسری تقریر اچکزئی صاحب نے کی جس میں انہوں نے کہا کہ ہماری افغانستان میں زمینیں ہیں ، ہم رہتے یہاں ہیں اور افغانستان آتے جاتے رہتے ہیں، جو سرحد پر باڑ لگائی جارہی ہے وہ ہم اکھاڑ پھینکیں گے، ہمیں افغانستان جانے کیلئے پاسپورٹ یا ویزا لینے کی ضرورت نہیں ہے۔

یہ بیان افغانستان کیلئے تو فائدہ مند ثابت ہوسکتا ہے مگر پاکستان کیلئے بارڈر سیکیورٹی مینجمنٹ انتہائی ضروری ہے۔

سینئر صحافی نے کہا کہ نواز شریف کی آج کی تقریر ان کی سابقہ تمام تقاریر سے زیادہ سخت تھی، آج انہوں نے عمران خان کی چند باتوں پر جوابی حملہ کیا ہے اور کہا کہ جو کچھ آج عمران خان کررہے ہیں اس کیلئے انہیں جیل جانا ہوگا، اورعلیمہ خان کے خلاف بھی کرپشن کے مقدمات چلائےجانے چاہیئں۔

رؤ ف کلاسرا نے کہا کہ نواز شریف نے آرمی قیاد ت پر بھی تنقید کی اور انہیں دھاندلی کا ذمہ دار قرار دیا، اور سخت تنقید جنرل فیض پر کی اور کہا کہ ڈی جی آئی ایس آئی جنرل فیض جسٹس شوکت صدیقی کے گھر گئے تھے اور ان سے کہا تھا کہ نواز شریف اور مریم نواز کو مزید 2 سال جیل میں رہنے دیا جائے اور انہیں ضمانت نہ دی جائے کیونکہ ہم نے بڑی محنت کی ہے انہیں حکومت سے ہٹانے اور جیل تک لانے میں ، تو آپ کیوں گئے جسٹس صدیقی کے گھر اور ایسی باتیں کیں۔

رؤف کلاسرا نے کہا کہ نواز شریف نے تقریر میں کہا کہ جسٹس قاضی فائز عیسیٰ نے فیض آباد دھرنے کے کیس میں جنرل فیض کے خلاف فیصلہ دیا تھا تو اس فیصلے کی وجہ سے آپ نے ان کے خلاف ریفرنس تیار کروایا ان تمام کارناموں کے باوجود آپ کو ترقی دی گئی اور ڈی جی آئی ایس آئی بنایا گیا۔

سینئر صحافی کے مطابق نواز شریف آج بھی پورے موڈ اور لڑائی کے موڈ میں تھے، وہ درمیانی راستے کو اختیار کرنے کے اپنی پارٹی رہنماؤں کے مشورے کو خاطر میں نہیں لارہے اور اپنی تقاریر میں مزید سختی پیدا کررہے ہیں اور آج کوئٹہ میں اس کی جھلک نظر آگئی۔

  • عمران — چیف جسٹس صاحب اور آرمی چیف باجوہ صاحب
    غداروں نے اعلان جنگ کر دیا ہے
    اس وقت ہم حالت جنگ میں ہیں —– آپ سب کا فرض ہے فوری
    طور پر حملے کا جواب دیا جائے اور ان سب غداروں کو گرفتار کریں
    قانون کے مطابق انہیں پھانسی کی سزا دلوائیں — پوری قوم اس میں
    آپ کے ساتھ کھڑی ہے
    اگر آج انہیں آزاد چھوڑ دیا گیا اور انہیں سزا نہ دی گئی تو پاکستان
    کو ٹوٹنے سے کوئی نہیں بچا پاۓ گا — اور اس کے ذمہ دار آپ ہوں گے
    اور تاریخ آپ کو کبھی معاف نہیں کرے گی

  • Aleema Khan has already submitted her source of income proofs, money trail and bank mortgage papers in the Supreme Court so this is a useless argument by corrupt Nawaz Sharif who gave Qatari letter to SC when court asked questions about his money trail and source of income. So Noora chor should stop this nonsense.

  • اس انپڑھ کو صرف ایک بات سنائی دی ہے
    یہ چور صحافی کہتے تھے مجرم کو ڈسکسس کرنا گناہ ہے
    لکن میاں محمّد نواز شریف صاحب تو ملزم ہیں
    اب یہ سرٹیفائیڈ چور بن گیا ہے اب تم غیرت کھا لو
    اور چوروں کو سپورٹ پروموٹ کرنا بند کرو


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >