پاکستان،ترکی ہمارے اندرونی معاملات میں دخل اندازی نہ کریں،فرانسیسی وزیر داخلہ

پاکستان اور ترکی اندرونی معاملات میں دخل اندازی نہ کریں،فرانسیسی وزیر داخلہ

فرانسیسی صدر کے گستاخانہ خاکوں سے متعلق متنازعہ بیان کے بعد پاکستان اور ترکی کی جانب سے فرانسیسی صدر کے بیان کی شدید مذمت کرتے ہوئے فرانس کی مصنوعات کے بائیکاٹ کا اعلان کرتے ہوئے شدید احتجاج ریکارڈ کروایا گیا تھا، جس کے رد عمل میں فرانسیسی وزیر داخلہ نے کہا ہے کہ پاکستان اور ترکی فرانس کے اندرونی معاملات میں دخل اندازی نہ کریں۔

فرانس کے وزیر داخلہ جیرالڈ درمانین کا اپنے دیئے گئے بیان میں کہنا تھا کہ "یہ ہمارے لئے بہت ہی حیرانی کی بات ہے کہ بیرونی ممالک ہمارے اندرونی معاملات میں دخل اندازی کر رہے ہیں۔

انہوں نے اپنے بیان میں کہا کہ ان کا اشارہ پاکستان اور ترکی کی جانب بھی ہے، جہاں کی پارلیمنٹ میں قرارداد پیش کرتے ہوئے حکومت سے مطالبہ کیا گیا ہے کہ وہ فوری طور پر فرانس سے اپنا سفیر واپس بلائے”

خیال رہے کہ ترکی کے صدر طیب اردوان نے گستاخانہ خاکوں سے متعلق فرانسیسی صدر کے متنازع بیان کے بعد اپنی قوم سے خطاب کرتے ہوئے ترک عوام سے اپیل کی تھی کہ وہ فرانس کی تمام مصنوعات کا بائیکاٹ کر دیں۔

اس سے قبل  ترک صدر نے فرانسیسی صدر کو دماغی مریض قرار دیتے ہوئے انہیں دماغ کا علاج کروانے کا مشورہ بھی دیا تھا،جس پر فرانس نے ردعمل دیتے ہوئے ترکی سے اپنا سفیر واپس بلا لیا تھا۔

دوسری جانب   26 اکتوبر کو پاکستان نے بھی فرانسیسی سفیر کو دفتر خارجہ بلاکر گستاخانہ خاکوں سے متعلق فرانسیسی صدر کے متنازع بیان کے جواب میں اپنا احتجاج ریکارڈ کروایا تھا۔

قبل ازیں پاکستانی وزیر اعظم نے اتوار کو کی جانے والی اپنی ٹویٹس میں بھی فرانسیسی صدر میکرون پر اسلام پر حملہ آور ہونے کا کہا تھا۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >