عوام میں شدید غم و غصہ ، ایاز صادق کیخلاف ان کے حلقے میں بینرز آویزاں

 

پاکستان مسلم لیگ ن کے رکن قومی اسمبلی اور سابق اسپیکر ایاز صادق کے بھارتی پائلٹ ابھی نندن کی رہائی کے بارے میں قومی اسمبلی کے ایوان میں دیئے گئے بیان پر شروع ہونے والا تنازع شدت اختیار کرگیا، ایاز صادق کی وضاحت کے باوجود ان کے بیان پر عوام میں غصے کی لہر دوڑ گئی۔

لاہور میں ایاز صادق کے حلقے این اے 129، این اے 132سمیت مختلف مقامات پر ایاز صادق کیخلاف بینرز لگادیئے گئے، بھارتی پائلٹ ابھی نندن کی تصویر کے ساتھ ایاز صادق کو بھی ابھی نندن کا روپ دے دیا، ایاز صادق کے حلقے کے علاقوں انگوری باغ،مصطفی آباد،غازی آباد،عسکری نائن زرار شہید روڈ سمیت دیگر علاقوں میں عوام نے غصے میں ایاز صادق کے پوسٹرز لگائے ہیں۔

مال روڈ، شادمان دیگرعلاقوں میں بھی مذمتی بینرزآویزاں کئے گیے ہیں،تحریر میں لکھا گیا کہ ایازصادق نے میرجعفراورمیرصادق کا کردار ادا کیا، نوازلیگ کی بھارت نوازی کسی صورت قابل قبول نہیں، قانونی کارروائی کی جائے،ریلیوں کا انعقاد بھی کیا جارہاہے۔

جب سیاسی رہنماؤں کی جانب سے ایاز صادق کے بیان پر شدید الفاظ میں مذمت کی جارہی ہے، اسد عمر، شبلی فراز اور شہباز گل سمیت حکومتی نمائندگان نے بھی خوب تنقید کی ہے۔

دوسری جانب رانا ثنا اللہ نے ایاز صادق کے بیان پر سوال اٹھادیا کہا ایاز صادق کا اسمبلی میں دیا گیا بیان چیلنج نہیں ہوسکتا، اگر ایاز صادق نے غلط بات کی تھی تو کیا اسپیکر سوئے ہوئے تھے؟

اسپیکر نے ایاز صادق کا بیان حذف کیوں نہیں کرایا؟ انھوں نے حکومتی رویئے پر بھی تنقید کی اور کہا کہ محض انتقام کے باعث ایاز صادق کے بیان پرہرزہ سرائی کی جا رہی ہے، حکومت کو اپوزیشن کے بیانات بھارتی بیانیے سے منسوب کرنے کے سوا کوئی کام نہیں، انتقام اور نفرت میں غرق ٹولا ملک پر مسلط ہے، وزیراعظم اپوزیشن کو گالیاں دینے والوں کی تعریف کرتے ہیں، لیگی رہنما نے کہا کہ انتقام کی آگ گلی محلوں تک پھیل گئی تو حالات قابومیں نہیں رہیں گے،


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >