رمضان شوگر ملز ریفرنس، حمزہ شہباز کا بکتر بند گاڑی میں عدالت پیش ہونے سے انکار

لاہور کی احتساب عدالت میں رمضان شوگر ملز ریفرنس پر سماعت کے دوران جیل حکام نے عدالت کو آگاہ کیا کہ مسلم لیگ ن کے حمزہ شہباز نے بکتر بند گاڑی میں آنے سے انکار کر دیا ہے جس پر معزز جج نے اظہارِ برہمی کیا۔

پولیس افسر نے بتایا کہ جیل سے حمزہ شہباز کو لانے کے لیے بکتر بند گاڑی بھیجی ہے، تاہم حمزہ شہباز نے بکتر بند گاڑی میں آنے سے انکار کر دیا ہے جس پر احتساب عدالت کے جج نے اظہار برہمی کرتے ہوئے کہا کہ ملزم کو پیش کرنا جیل انتظامیہ کی ذمے داری ہے،کیا عدالت جیل چلی جائے؟

جوڈیشل افسر نے عدالت کو بتایا کہ حمزہ شہباز کو لانے کے لیے بکتر بند گاڑی جیل میں کھڑی ہے، مگر وہ باہر نہیں آ رہے، حمزہ شہباز نے بکتر بند گاڑی میں آنے سے انکار کر دیا ہے۔

عدالت نے ریمارکس دیئے کہ یہ اب ملزمان کی مرضی ہو گئی کہ وہ عدالت پیش ہوں یا نہ ہوں، ملزم کی پسند ہو گی کہ وہ کونسی گاڑی میں جائے گا، سینکڑوں ملزمان عدالتوں میں پیش ہوتے ہیں، کیا وہ بھی پسند کی گاڑی کی ڈیمانڈ کرتے ہیں؟ جیل حکام کہاں ہیں؟ان کی ذمے داری نہیں بنتی؟

احتساب عدالت کے جج نے یہ بھی کہا کہ یہ ریاست کی ناکامی ہے کہ وہ ملزم کے سامنے بے بس ہے، عدالت قانون کے مطابق حکم نامہ جاری کرتی ہے۔

عدالت نے جیل حکام کے جواب پر فیصلہ محفوظ کر لیا اور حمزہ شہباز کے وارنٹ پر آئندہ تاریخ دینے کا حکم دیتے ہوئے سماعت ملتوی کر دی۔

  • ھور دسو جناب،،،،،، اگر کرم دین رکشے والا تھانے جانے سے انکار کرتا تو اسکے ساتھ ھوتا کیا ؟؟؟؟ بس یہ وہ دیمک زدہ سسٹم ھے جو اس معاشرے کو مولا جٹ اور نوری نت بنا رہا ھے


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >