کشمور زیادتی کیس کے ملزمان کو پکڑنےوالے اے ایس آئی محمد بخش کا کراچی تبادلہ

کچھ روز قبل سندھ کے علاقے کشمور سے ایک واقعہ سامنے آیا جس میں خاتون اور اس کی 4 سالہ بچی کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا گیا، خاتون کے مطابق اسے نوکری کا جھانسہ دے کر بلایا گیا اور دونوں ماں بیٹی سے کئی روز تک زیادتی کی گئی۔

اس دل دہلا دینے والے واقعہ کے ملزموں کو گرفتار کرنے کی پلاننگ کرنے والے سندھ پولیس کے اے ایس آئی محمد بخش نے اپنی بیٹی کی جان خطرے میں ڈال کر ان ملزموں کو نہ صرف گرفتار کیا بلکہ خاتون کی بچی کو بازیاب بھی کرایا اور اپنے اس کارنامے سے نمایاں ہوئے۔

اے ایس آئی محمد بخش کی ذہانت کے لیے خراج تحسین پیش کرنے کی غرض سے کئی تقریبات منعقد کر کے ان کی حوصلہ افزائی کی گئی، اسی حوالے سے 2 ہفتے قبل سی پی او کراچی کے دفتر میں بھی تقریب منعقد ہوئی جہاں فیصلہ کیا گیا کہ اسسٹنٹ سب انسپکٹر محمد بخش کا پولیس ٹریننگ سنٹر تبادلہ کیا جائے اور ان کو اہلکاروں کی تربیت کرنے کا کام سونپ دیا جائے۔

یاد رہےکہ اکتوبر کوآخری ہفتےمیں 4 سالہ بچی کواس کی والدہ کےہمراہ نوکری کا جھانسہ دے کر کشمور لے جایا گیا جہاں ماں بیٹی کو 3 ملزمان نے گینگ ریپ کا نشانہ بنایا۔

کشمور پولیس نے ماں بیٹی کو بازیاب کرکے ملزمان کو گرفتار کرلیا تھا جن میں ایک ملزم پولیس مقابلے میں مارا گیا۔ محمد بخش کو ستارہ شجاعت اور ان کی بیٹی ریشما کو ستارہ امتیاز دیا جائے گا۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >