اوکاڑہ: ڈاکوؤں کو پکڑنے والا خاندان پولیس کی وجہ سے مشکل میں پڑگیا

اوکاڑہ کے علاقے صابر ٹاؤن میں 5 ڈاکوؤں نے گھر میں گھس کر لوٹ مار کی، ڈاکو گھر سے 8 تولے سونا، نقدی اور موبائل فون لوٹ کر فرا ہونے لگے تو گھر والوں کے شور وغل کر کے لوگوں کو اکٹھا کر لیا جس پر 3ڈاکو رنگے ہاتھوں پکڑے گئے۔

اہل علاقہ نے ڈاکوؤں کو پکڑ کر خوب درگت بنائی اور پھر پولیس کے حوالے کر دیا، پولیس نے گرفتار کیے گئے ڈاکوؤں سے مسروقہ سامان اور اسلحہ برآمد کیا۔

تاہم متاثرہ خاندان کا کہنا ہے کہ پولیس نے ڈاکوؤں سے ہمارا سامان برآمد بھی کر لیا ہے مگر ہمیں سامان نہیں دیا جا رہا جبکہ مقدمہ بھی 5 ڈاکوؤں کی بجائے 4کے خلاف درج کر کے ہمیں دھمکیاں دی جا رہی ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ مقدمہ درج کرانے کے بعد ہمیں ڈاکوؤں کی جانب سے بھی سنگین نتائج کی دھمکیاں مل رہی ہیں اور پولیس ہاتھ پر ہاتھ دھرے بیٹھی ہے۔

متاثرہ فیملی کا کہنا ہے کہ خدشہ ہے کہ پولیس نے ملزمان کے ساتھ ساز باز کر لی ہے اور مقدمے سے مزید ملزموں کو بغیر کارروائی کے فارغ کر دیا جائے گا جس کے بعد ہمیں مزید خطرات لاحق ہوں گے۔ مقامی پولیس افسران ملزموں کی پشت پناہی میں لگے ہیں۔

درخواست دہندہ نے اپیل کی ہے کہ وزیراعلیٰ پنجاب معاملے پر نوٹس لے کر آئی پنجاب کو ہدایت دیں کے بروقت انصاف فراہم کیا جائے اور ملزموں کی پشت پناہی کرنے والے پولیس افسران کے خلاف کارروائی کی جائے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >