مریم نواز کا دوہرا معیار ؟ طلباء کو امتحان دینے کیلئے بلانے پر تنقید دوسری طرف جلسے

پاکستان میڈیکل کمیشن کی انتیس نومبر کو میڈیکل کے داخلہ ٹیسٹ کروانے پر بضد ہیں، جس کی مسلم لئگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے مذمت کردی، مریم نواز نے ٹویٹ میں لکھا کہ حکومت نے تعلیمی ادارےبند کرنےکااعلان تو کردیا مگرمیڈیکل کے امتحانات کیوں ملتوی نہیں کئے۔ میڈیکل طلبہ کوایم ڈی کیٹ ٹیسٹ کیلئےمجبورکیاجارہاہے،کیا میڈیکل کےڈیڑھ لاکھ طلبہ اور ان کے اہلخانہ کا تحفظ ضروری نہیں؟

انہوں نے ٹویٹ کیا کہ ڈیڑھ لاکھ خاندان ذہنی اذیت کاشکارہیں، پوچھا کہ طلبہ اوران کےخاندانوں کی زندگیوں کوخطرےمیں ڈالنےکا مقصد کیا ہے؟

ملک میں کورونا کے بڑھتے کیسز کے باعث طلبہ نے انٹری ٹیسٹ کا انتیس نومبر کو انعقاد پر تشویش کا اظہار کردیا ہے،دوسری جانب نزلہ، کھانسی بخاروالے بیمارطلبہ بھی پریشان ہیں، کیونکہ انہیں داخلہ ٹیسٹ میں بیٹھنےکی اجازت نہیں دی گئی جس کی وجہ سے بیمار طلبہ کےسال ضائع ہونے خدشہ بھی منڈلا رہاہے۔

ایم سی کے مطابق پندرہ سے انتیس نومبرکے دوران جن امیدواروں کے کورونا ٹیسٹ مثبت آئیں گے ان کا تیرہ دسمبرکوخصوصی امتحان لیا جائے گا،متاثرہ طلبہ کیلئے کورونا رپورٹ پی ایم
سی کی ویب سائٹ پر اپ لوڈ کرنا لازمی ہوگا۔

مسلم لیگ ق کے رہنما ق لیگ کے رہنما مونس الہی نے ملک کورونا کی بگڑتی صورتحال اور دوسری لہرکے پیش نظرایم ڈی کیٹ کے امتحان کے انعقاد پر فوری نظرثانی کا کہا تھا اوت امتحانات ملتوی کرنے کا مطالبہ کیا تھا۔

  • بڑے بڑے بیشرم ہیں لیکن اس مکار اور جھوٹی عورت کاکوئی ثانی نہیں
    ایس او پیز کے مطابق طلبہ کے امتخان دینے سے زندگیوں کو خطرہ ہے
    اپکے جلسوں میں آنے والے تو حیوان ہیں جنکی زندگی کو کوئی خطرہ نہیں 😡
    ہر روز یہ جاہلہ اپنی بونگی سے ذلیل ہوتی ہے اور لفافے بیچارے اسکا دفاع کرتے رہتے ہیں

  • اس کے باپ نے اسے میڈیکل میں داخل کروانے کے لیے سارا سیٹم تباہ کیا
    اور پھر بھی فیل ہو گی اس سے پہلے ہماری میڈیکل ڈگری ساری دنیا میں منی
    جاتی تھی اب ہر کوئی ڈاکٹر بنا پھرتا ہے-


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >