بھارت جانیوالے پاکستانی ہندو خاندان مودی سرکار کے مظالم سے تنگ آکر واپس آنا شرو ع

پاکستان سے ہجرت کرکے بھارت جانے والے ہندوؤں کی بڑی تعداد واپس آنا شروع ہوگئی ہے، واپس آنے والے ہندوؤں کا کہنا ہے کہ بھارت کے مقابلے میں پاکستان میں باعزت زندگی گزار سکتے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان سے ہجرت کرکے بھارت جانے والے دلت ہندوؤں کی بڑی تعداد بھارتی سرکار کے ظلم و ستم سے تنگ آکر واپس پاکستان آنا شروع ہوگئی ہے، بھارت میں براہمن اور انتہاپسند ہندوؤں کے ہاتھوں 11 دلت ہندوؤں کے قتل کے بعد مزید 234 ہندو واپس پاکستان آگئے ہیں۔

بھارت سے واہگہ بارڈر کے راستے واپس آنے والے ہندوؤں میں سے ایک خاندان کے سربراہ اجو کا کہنا تھا کہ پاکستان سے ہجرت کرکے بھارت جانے والے ہندو یہ امید لے کر گئے کہ وہاں ہمارا مستقبل یہاں سے بہتر ہوگا، مگر وہاں تو ہمیں قتل کیا جانے لگا ہے۔

انہوں نے کہا کہ آج کا بھارت صرف براہمن ذات کے ہندوؤں کا ملک ہے، ہم یہاں سے بھارت جانے والے ہمارے دیگر بھائیوں سے بھی اپیل کرتے ہیں کہ وہ بھی واپس پاکستان آجائیں، کیونکہ یہاں ہم بھارت سے زیادہ باعزت طور پر زندگی گزار سکتے ہیں۔

واپس آنے والے ہندوؤں کا کہنا تھا کہ ہم حکومت ِ پاکستان سے اپیل کرتے ہیں کہ وہ بھارت میں ہمارے 11 ساتھیوں کے قتل کا معاملے پر نوٹس لے۔

واضح رہے کہ پاکستانی ہندو شہری اپنی مذہبی رسومات کی ادائیگی کے بہانے بھارت ہجرت کرگئے تھے مگر وہاں کی حکومت اور دیگر انتہا پسند ہندو ذاتوں کے رویوں اور ظلم و ستم نے انہیں واپس پاکستان آنے پر مجبور کردیا، ذرائع کا کہنا ہے کہ پاکستا ن سے بھارت جانے والے ہندوؤں میں سے 11 کے قتل کے بعد اب تک 400 سے زائد ہندو شہری واپس آچکے ہیں ، جن میں سندھ کے علاقے ٹنڈو آدم کے رہائشی اور ان کی فیملی بھی شامل ہیں۔

  • Hindu in sindh living good life, I’ve few Hindu friends from sindh. Human rights champions make lot of nouse if one incident happened once in a blue moon.
    At least we don’t force Hindus to say Kalima to become muslim.


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >