کرائسٹ چرچ میں ایک اور پاکستانی کرکٹر کا کورونا ٹیسٹ مثبت آگیا

ملک میں جاری کورونا کی دوسری لہر نے شدت اختیار کرلی،جس نے شہریوں سمیت ججز، ڈاکٹرز، سیاستدانوں اور کھلاڑیوں سب کو ہی لپیٹ میں لے لیا، کورونا کی وجہ سے قومی ٹیم کا دورہ نیوزی لینڈ بھی خطرے میں آگیا، کیونکہ کرائسٹ چرچ میں ایک اور پاکستانی کرکٹر کا کورونا ٹیسٹ مثبت آگیا ہے، جس کے بعد متاثرین کی تعداد سات ہوگئی۔۔ پی سی بی کے نیوزی لینڈ کرکٹ سے رابطے کے بعد قومی اسکواڈ کی آئسولیشن میں نرمی کردی گئی۔۔ قومی کھلاڑیوں کی ٹریننگ جلد کھولنے کی درخواست بھی کردی۔۔

کرائسٹ چرچ میں جمعےکے روز دوسرا کورونا ٹیسٹ ہوا،اسکواڈ میں سے ایک ارکان کا ٹیسٹ مثبت آیا،جنہیں فوری آئیسولیٹ کردیا گیا،وزارت صحت نیوزی لینڈ کے مطابق رپورٹ ہونے والے پلئر کے قریبی روابط کو ٹریس کررہے ہیں،تحقیقات میں تعاون پر پاکستانی کرکٹرزکا پھرسے شکریہ ادا کیا۔۔

معاملے پر پی سی بی نے نیوزی لینڈ کرکٹ سے رابطہ کیا،جس کے بعد قومی اسکواڈ کی آئسولیشن میں نرمی کردی گئی،جن ممبرزکے مسلسل دو ٹیسٹ منفی آئے،انہیں مخصوص اوقات میں چہل قدمی کی اجازت مل گئی،ممبرزبالکونیز میں آپس میں گفتگو بھی کرسکیں گے،پی سی بی نے نیوزی لینڈ کرکٹ سے ٹریننگ کی بھی درخواست کی،قومی اسکواڈ کا اگلا ٹیسٹ تیس نومبر کو ہوگا۔

  • So all players who got Covid19 during long.. transit flight to NZ.all airports are not bio securable..NZ hotel is also not bio securable..hotel staffs..foods also not secure..these all aspects which led ours national players to risk Thiers lives..
    Yes some mistakes was happened by ours players..but these were not high risks that they got Covid19.. like.. received foods on hotel room door steps without mask… talking each other on room door .which was safe distance…NZ should respect Pakistan cricketers lives as they got Covid19 Becoz of NZ tour..while they were safe and healthy in Thiers country…


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >