شعیب اختر نیوزی لینڈ کرکٹ بورڈ کی وارننگ پر برس پڑے

شعیب اختر کی نیوزی لینڈ کرکٹ بورڈ کی وارننگ پر کرارا جواب

نیوزی لینڈ میں موجود پاکستانی اسکواڈ کے سات کھلاڑیوں کے کورونا ٹیسٹ مثبت آنے کے بعد نیوزی لینڈ کرکٹ بورڈ نے آخری وارننگ دیتے ہوئے کہا تھا کہ اگر ایس او پیز کی خلاف ورزی کی تو پاکستان ٹیم کو وطن واپس بھیج دیا جائے گا، جس پر پاکستان کے سابق فاسٹ بولر شعیب اختر جواب دینے میدان میں آگئے، اپنے یوٹیوب چینل پر نیوزی لینڈ کرکٹ بورڈ کے حکام کو کھری کھری سنادی۔

شعیب اختر نے اپنی نئی ویڈیو میں کہا کہ نیوزی لینڈ کو واضح پیغام دینا چاہتا ہوں یہ کوئی کلب ٹیم نہیں ہے بلکہ پاکستان کی قومی ٹیم ہے،ہمیں آپ کی ضرورت نہیں ہے، پاکستان کی کرکٹ ابھی ختم نہیں ہوئی، آپ کو ہمارا احسان مند ہونا چاہیے تھا کہ مشکل وقت میں پاکستان نے دورہ کیا، اس طرح کے بیانات دینے سے نیوزی لینڈ کو گریز اور محتاط رہنا چاہیے،نیوزی لینڈ کرکٹ بورڈ کو اپنا رویہ درست کرنا چاہئے،نیوزی لینڈ کے دورے پر ہماری نیشنل کرکٹ ٹیم گئی ہے کوئی کلب کی ٹیم نہیں۔

سابق فاسٹ بولر نے پی سی بی کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ اگر ٹیم واپس بھیجی گئی تو نیوزی لینڈ بورڈ سے تعلق ختم کردینا چاہیے،پاکستان کرکٹ بورڈ کی ناکام انتظامیہ اور پالیسیوں کا قصور ہے کہ نیوزی لینڈ کرکٹ بورڈ ہمیں دھمکی دے رہا ہے اور اگر میں پی سی بی میں ہوتا تو نیوزی لینڈ کرکٹ بورڈ کومنہ توڑ جواب دیتا۔

راولپنڈی ایکسپریس کے نام سے پہچان رکھنے والے شعیب اختر نے مشورہ دیا کہ قومی ٹیم کو نیوزی لینڈ بھیجنے کے لیے کمرشل کے بجائے چارٹرڈ طیارہ استعمال کرنا چاہیے تھا تاکہ وائرس کا خطرہ کم رہتا۔ پاکستانی کھلاڑیوں کوجہازمیں سفر کے دوران بنائی جانے والی ویڈیو پوسٹ نہیں کرنی چاہیے تھی۔

دوسری جانب سابق کپتان وسیم اکرم نیوزی لینڈ میں موجود قومی کرکٹرز پر خوب برسے کہا قومی کرکٹرز کو بچوں کی طرح تو سمجھایا نہیں جا سکتا، کرکٹرز کے پیچھے ڈنڈا لے کر تو کوئی گھوم نہیں سکتا، جب ایس اوپیز کا بتایا گیا تو پاکستانی کرکٹرز کو اسے فالو کرنا چاہیے تھا۔

  • Salam Pakistani

    Shoaib akhtar has overacting it’s sad if nz government has issued
    Any of that statement but our players should have been acted responsibly specially at this time when corona is biggest threat for mankind.

    Shoaib don’t over react and think it from nz prospects they are small economy base country they can’t afford to let this corona spread because of some irresponsible attitude of cricketers.


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >