ساہیوال میں 8 سالہ بچی کے قاتل باپ ،چچا ، پھوپھی ، پھوپھا نکلے

ساہیوال میں 8 سالہ بچی کا سنگدل باپ کے ہاتھوں قتل

ساہیوال میں پیش آیا، دلخراش واقعہ، جہاں بے رحم باپ نے بھائی بہن اور بہنوئی کے ساتھ مل کر آٹھ سالہ بیٹی کی جان لے لی، ساہیوال میں گزشتہ روز اغواء کے بعد قتل ہونے والی دوسری کلاس کی کمسن طالبہ رخسانہ کے قتل میں والد چچا اور پھوپھی سمیت پھوپھا ملوث نکلے۔

پولیس کے مطابق کمسن رخسانہ کو اس کے باپ، چچا، پھوپھی اور پھوپھا نے گھر میں قتل کرکے لاش بوری میں ڈال کر گھر کے باہر پھینکی، بچی کو چھوٹی کلہاڑی کے ساتھ رات کو گھر میں بے دردی سے قتل کیا گیا، پولیس نے گھر سے بچی کے جوتے اور آلہ قتل برآمد کرلیا ہے،والد اور رشتہ داروں نے مقدمہ بازی کی رنجش پر اپنی ہی بیٹی کو قتل کیا، پولیس نے والد اور پھوپھی کو حراست میں لے کر تفتیش کا دائرہ کار تمام رشتے داروں تک بڑھا دیا ہے۔

گزشتہ روز ساہیوال میں 8 سالہ بچی رخسانہ کو اغوا کے بعد قتل کردیا گیا تھا، اسپتال ذرائع نے انکشاف کیا تھا کہ ابتدائی پوسٹ مارٹم رپورٹ میں بچی سے بد فعلی کے شواہد ملے ہیں جب کہ بچی کے سر میں کھدال مارنے اور جسم پر تیز دھار آلے کے متعدد زخموں کے نشانات پائے گئے ہیں۔

  • یا اللّٰہ اس بہتر ہے قیامت جلدی لے آ میرے رب نہیں تو انسان انسانوں کو ہی کھاجائیں گے اور قیامت تک شاید کوئ ذی روح نہ بچے۔۔۔۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >