جو امت حضور اکرم ﷺ کی توہین پر کچھ نہ کر سکے اسے مر جانا چاہیے، چیف جسٹس

جو امت حضور اکرم ﷺ کی توہین پر کچھ نہ کر سکے اسے مر جانا چاہیے، چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ

لاہور ہائی کورٹ میں لاہور ہائی کورٹ کے چیف جسٹس قاسم خان نے انبیاء کرام اور صحابہ کرام کے خلاف توہین آمیز پوسٹوں کی درخواست کرتے ہوئے توہین رسالت اور مقدس ہستیوں کی توہین سے متعلق رولز پیش کرنے کا حکم دیا اور انہوں نے کہا کہ جو امت حضور اکرم ﷺ کی توہین پر کچھ نہ کر سکے اسے مر جانا چاہیے۔

لاہور ہائی کورٹ میں سماعت کے دوران ایڈیشنل اٹارنی جنرل اشتیاق احمد خان کہاں عدالت کو بتاتے ہوئے کہنا تھا کہ سوشل میڈیا پر انبیاء کرام اور صحابہ کرام کے خلاف توہین آمیز مواد کی روک تھام کے لیے گزر نوٹیفیکیشن جاری ہو چکا ہے، اس کے علاوہ سائبر کرائم رولز میں توہین آمیز مواد کے خلاف درخواست دائر کرنے اور کاروائی کا ذکر موجود ہے، جس پر چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ یہ کوئی سیکولر حکومت ہے؟ جس نے یہ رولز منظور کیے۔

چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ جسٹس قاسم خان کا ایڈیشنل اٹارنی جنرل سے استفسار کرتے ہوئے کہنا تھا کہ آپ کی جانب سے عدالت میں جو رولز جمع کروائے گئے ہیں جس سے بظاہر ایسا لگتا ہے کہ ایک عام آدمی جو متاثر ہوا ہے ، صرف وہی شکایت درج کروا سکتا ہے، جسٹس قاسم خان نے کہا کہ چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ یہ کوئی سیکولر حکومت ہے جس نے یہ رولز منظور کیے۔

انہوں نے کہا کہ اگر ملکی قوانین کی خلاف ورزی کرنے پر لوگ مقرر کیے جا سکتے ہیں تو حضور اکرم صلی اللہ علیہ وسلم کا معاملہ بھی تو قوانین میں ہے، ایسی امت کو مر جانا چاہیے جو دو عالم کے سرکار کی توہین پر کچھ نہ کر سکے، جس پر ایڈیشنل اٹارنی جنرل اشتیاق احمد خان کا کہنا تھا کہ توہین رسالت کے معاملے پر نو مقدمات درج کئ ہیں لہذا اس معاملہ پر عدالت کی مزید معاونت کے لیے مہلت دی جائے۔

چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ جسٹس قاسم خان نے نیشنل اٹارنی جنرل مشتاق احمد خان کی مہلت کی استدعا منظور کرتے ہوئے عدالت نے درخواست کی سماعت 2 ہفتوں کے لیے ملتوی کر دی۔

  • یہ بےغیرت کا بچہ نون لیگ کا پالتو ہے جس نے ختم نبوت کہ قانون میں ترمیم کی کوشش کی. لعنت اس نام نہاد عاشق رسول صلی اللہ علیہ وسلم پر

  • bhai aap apna kaam sahinker rehe ho? kya mukammal emaandari se bagher kisi taasub ke fesle sunate ho..

    Hazoor ki taleemat per amal kerna hee un kee manna hai.

    un ke naam per sirf bandookein utha ker katlo gharat kerna nhin

  • عاشق رسول خود کو کہنے سے کوئی عاشق نہیں بن سکتا۔ جو جج ایمانداری سے فیصلہ نہیں کرسکتا اور چوروں کوریلیف دینے میں مشہور ہو ہم کیسے مان لیں وہ عاشق رسول ہوگا۔

  • We must once for all make a law on Blasphemy ,strict law ,which include all faiths religious Prophets ,Saints ,should not be target of insults ,Muhammad ,Jesus and Moses s PBUT.,Lord Budha ,Guru Nanak and Hindu dieties ,this is in Quran not to insult other religions ,Gods ,so that they may not retaliate and abuse your pProphets and Creator


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >