حکومت نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ کر دیا

 پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ،پٹرول3 روپے20 پیسے مزید مہنگا

وفاقی حکومت نے رواں سال کے آغاز پر دوسری بار پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں بڑھا دی ہیں۔ نئی قیمتوں کا اطلاق آج رات 12 بجے سے ہوگا۔

معاون خصوصی برائے سیاسی روابط ڈاکٹر شہباز گل نے مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ ٹوئٹر پر بتایا کہ وزیراعظم نے اوگرا اور فنانس ڈویژن کی طرف سے پٹرول کی قیمت میں 13 روپے فی لٹر بڑھانے کی سمری منظور نہیں کی اور قیمتوں میں کم سے کم اضافے کا فیصلہ کیا۔

نوٹیفیکیشن کے مطابق پیٹرول کی قیمت میں 3 روپے 20 پیسے، ہائی سپیڈ ڈیزل کی قیمت میں 2 روپے 95 پیسے اور مٹی کے تیل کی قیمت میں 3 روپے کا اضافہ منظور کیا گیا ہے۔ پیٹرول کی نئی قیمت 109.20 روپے، ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت 113.19 روپے اور مٹی کے تیل کی قیمت 76.65 روپے ہوگی۔

نوٹیفیکیشن کے مطابق اوگرا اور فنانس ڈویژن نے پیٹرول کی قیمت میں 13.7 روپے، ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت میں 11.03 روپے اور مٹی کے تیل کی قیمت میں 10.55 روپے اور لائٹ ڈیزل کی قیمت میں 15.33 روپے اضافہ کرنے کی سمری بھیجی تھی۔

حکومت نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ کر دیا

یاد رہے کہ حکومت نے دسمبر کے اختتام پر پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں 3 روپے 95 پیسے فی لٹر تک اضافے کی منظوری دے دی تھی۔

  • نواز شریف کا عذاب اج بھی پاکستان میں جاری ہے
    مہنگی بجلی کی شکل میں
    مہنگی ایل این جی کی شکل میں
    معاشی تباہی کی شکل میں
    قرضوں سے فضول پروجیکٹ بنانے کی شکل میں
    اداروں کی تباہی کی شکل میں
    منی لانڈرنگ کی شکل میں
    کرپٹ لوگوں کو ترقی دینےکی شکل میں
    پولیس میں قاتلوں کو بھرتیوں کی شکل میں

  • معاون خصوصی برائے سیاسی روابط ڈاکٹر شہباز گل نے مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ ٹوئٹر پر بتایا کہ وزیراعظم نے اوگرا اور فنانس ڈویژن کی طرف سے پٹرول کی قیمت میں 13 روپے فی لٹر بڑھانے کی سمری منظور نہیں کی اور قیمتوں میں کم سے کم اضافے کا فیصلہ کیا۔
    Every time when they increase the price, they add this sentence. PMIK increased less price as ogra sent suggestion.


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >