برڈ فلو کا خدشہ، پولٹری کی قیمتوں میں بڑی کمی آ گئی

برڈ فلو کا خدشہ، پولٹری کی قیمتیں 250 سے 170 پر آ گئیں

خیبرپختونخوا میں برڈ فلو کے خطرے کے باعث بالائی اضلاع سے مرکزی علاقوں میں پولٹری کی سپلائی روک دی گئی۔ برڈ فلو کے ممکنہ خطرے کے سبب مرغی کے گوشت کی قیمتیں بھی 250 سے کم ہو کر 170 پر آ گئیں۔

کے پی میں عوام نے پولٹری کے ممکنہ خطرے کے سبب مرغی کے گوشت کا استعمال کم کیا تو نہ صرف مرغی کی قیمتیں گر گئیں بلکہ جن علاقوں سے پشاور، ایبٹ آباد، مانسہرہ اور آزادکشمیر میں مرغیاں سپلائی کی جاتیں تھیں ان علاقوں سے سپلائی بھی روک دی گئی ہے۔

مگر عوام اب بھی پریشان ہے کیونکہ پہلے آسمانوں کو چھوتی قیمتوں کے باعث لوگ مرغی کا گوشت نہیں کھا سکتے تھے اور اب اس بیماری کے خطرے سے نہیں کھایا جا سکتا۔

پولٹری فارم اور شیڈ مالکان کا کہنا ہے کہ برڈ فلو سے متعلق افواہوں کی وجہ سے کاروبار متاثر ہوا ہے مگر مرغیوں کی سپلائی کے متاثر ہونے کی اصل وجہ موسم اور دھند ہے جس کی وجہ سے افواہیں اڑانےوالوں کو موقع ملا اور قمتیں نیچے آ گئی ہیں۔

یاد رہے کہ رواں سال اس سے پہلے اب تک بھارتی ریاست مدھیہ پردیش کے 19 ضلعوں میں برڈ فلو کے حوالے سے خبریں گردش کر رہی تھیں۔ جہاں سے یہ خبریں بھی سامنے آئیں کہ 42 ضلعوں میں تقریباً2100 کے قریب پرندے اور جانوروں کے مرنے کی اطلاعات ہیں۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >