آپ سب کی سپورٹ کا شکریہ : کینولی ریسٹورنٹ کے تضحیک کا شکار مینجر اویس

گزشتہ روز اسلام آباد کے ایک نجی ریستوران کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی جس میں اس ریستوران کی مالکن دو خواتین نے اپنے منیجر کو بلا کر پہلے اپنا اور اپنے منیجر کا انگریزی میں تعارف کرایااور بتایا کہ ان کا نام اویس ہے، منیجر سے ان کے متعلق سوال پوچھا جس پر منیجر کہتے ہیں کہ وہ تقریباً 9 سال سے اس ریستوران میں کام کررہے ہیں۔

ان میں سے ایک خاتون پوچھتی ہے آپ نے انگلش کی کتنی کلاسیں لی ہیں اور منیجر سے انگریزی میں اپنا تعارف کرانے کے لیے کہا جس پر منیجر ہچکچاتے ہوئے بمشکل ایک جملہ ہی بول پاتے ہیں۔ اس کے بعد خاتون نہایت توہین آمیز انداز میں ہنستے ہوئے منیجر کا مذاق اڑاتی اور کہتی ہے کہ یہ ہمارے منیجر ہیں جو ہمارے ساتھ 9 سال سے ہیں اور یہ وہ بہترین انگلش ہے جو یہ بولتے ہیں۔

اویس نے نجی ٹی وی چینل سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ وہ گزشتہ 9 سال سے زائد عرصے سے اس ہوٹل کے ساتھ کام کر رہے ہیں اور ان کو پہلے کبھی ایسی صورتحال کا سامنا نہیں کرنا پڑا ان کے لیے یہ گفتگو بالکل عام تھی اور بہت ہنسی مذاق میں کی گئی گفتگو تھی۔

ریستوران منیجر اویس سے جب ان مالکان کے ملازمین کے ساتھ رویے سے متعلق سوال کیا گیا تو انہوں نے دبے الفاظ میں کہا کہ مالکان اچھے ہیں اسی لیے اتنے سال سے وہ انہی کے ساتھ کام کر رہے ہیں۔

اپنی وائرل ہونے والی ویڈیو پر اویس نے لوگوں کا شکریہ ادا کیا اور کہا کہ یہ بات بالکل سچ ہے کہ انگریزی عالمی زبان ہے اور یہ بھی آنی چاہیے مگر اردو ہماری قومی زبان ہے ہمیں اسی پر فخر ہونا چاہیے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >