غریب،کم آمدن والوں کیلئے منصوبوں کا آغاز جلد کیا جائے،وزیراعظم

غریب،کم آمدن والوں کیلئے منصوبوں کا آغاز جلد کیا جائے،وزیراعظم

وزیراعظم عمران خان نے سال نو کے آغاز میں بتائے گئے دو اہداف کو مکمل کرنے کی ہدایت کردی ہے،وزیراعظم عمران خان نے غریب اور کم آمدن طبقے کے لئے منصوبے سے مستفید ہونے کیلئےٹائم لائنز متعین کرنے اورجلد آغاز کی ہدایت کردی ہے۔

وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت راوی اربن ڈیولپمنٹ منصوبے کا جائزہ اجلاس ہوا،وزیراعظم نے کہا لاہور کے عوام کیلئےیہ منصوبہ سماجی ،معاشی لحاظ سے انتہائی اہم ہے، منصوبے کی تکمیل سے غیر استعمال شدہ زمین پر معیاری تعمیرات ممکن ہوگی، معاشی سرگرمیوں میں اضافہ ،روزگار کے مواقع میسر ہوں گے۔

اجلاس میں پنجاب کے چھوٹے شہروں کے اطراف میں کم آمدنی والے طبقے کو کم لاگت کے گھروں کی تعمیر کے مجوزہ منصوبوں کے حوالے سے بریفنگ دی گئی، جس پر وزیراعظم نے غریب اور کم آمدن طبقے کیلئے اس منصوبے کی افادیت کے پیش نظر ٹائم لائنز متعین کرنے اورجلد آغاز کی ہدایت کی۔

کم لاگت والے گھروں کی تعمیر کےمجوزہ منصوبوں پر بھی بریفنگ دیتے ہوئے بتایا گیا کہ 25 سے 27 اضلاع کے اطراف 3 سے 5 مرلہ گھروں کے منصوبے شروع ہوں گے، بعد ازاں ان کا دائرہ کار 87 مختلف لوکیشنز تک بتدریج بڑھایا جائے گا،حکومت پنجاب زمین فراہمی کیساتھ ابتدائی مرحلے میں سرمایہ فراہم کرے گی ، اگلے مرحلے میں مارگیج فنانسنگ کے تحت سبسڈی فراہم کی جائے گی۔

اجلاس کو ویسٹ واٹرپلانٹ کے حوالے سے پیش رفت پربھی بریفنگ دی گئی، بریفنگ میں کہا ہے کہ سرمایہ کاروں کی کانفرنس کے جلدانعقاد کیلئےاقدامات کئے جا رہے ہیں جبکہ شرکا نے منصوبے میں اراضی کےحصول میں پیش رفت پر بھی آگاہ کیا ۔

سینٹرل بزنس ڈسٹرکٹ منصوبے ،والٹن ایئرپورٹ کی منتقلی پر بھی بریفنگ دیتے ہوئے کہا منصوبے کی کمرشل، ریٹیل ،رہائشی زوننگ عالمی معیار کے تحت کی جا رہی ہے، تعمیرات سےمتعلق نئے تصور کے تحت منصوبے کو مکمل کیا جائے گا۔

اجلاس میں معاون خصوصی شہباز گل،چیئرمین نیا پاکستان ہاؤسنگ اتھارٹی وسینئرافسران شریک ہوئے جبکہ ہاشم جواں بخت ،مشیرسلمان شاہ،معاون خصوصی فردوس عاشق ویڈیولنک پرموجود تھے،چیئرمین راوی اربن ڈیویلپمنٹ اتھارٹی ودیگرافسران بھی ویڈیو لنک کے ذریعے شریک تھے، راوی سٹی منصوبے میں کنسلٹنٹس سے مذاکرات اور ڈیزائن آخری مراحل میں داخل ہوگیا۔

وزیراعظم عمران خان نے سال نو کے دو اہداف مقرر کرلیے تھے،جن میں صحت کی مفت سہولیات اور کوئی بھوکا نہ سوئے پروگرام شامل ہے، “یونیورسل ہیلتھ کوریج” پنجاب، گلگت بلتستان اور خیبر پختون خوا کے لیے ہے، ہر گھرانے کے پاس ہیلتھ انشورنس ہوگی، شہری کسی بھی اسپتال میں جاکر ہیلتھ کارڈ دکھاکر اپنا علاج کراسکیں گے۔

کوئی پاکستان میں بھوکا نہ سوئے پروگرام اس میں پوری قوم اور سارا ملک شامل ہوگا، آئی ٹی کا استعمال کرکے ان علاقوں کی نشاندہی کی جائے گی، جہاں بھوک زیادہ ہے، فلاحی اداروں کے ساتھ مل کر احساس پروگرام کے ذریعے یہ نیا پروگرام لانچ کیا جائے گا، تاکہ سال کے آخر تک پاکستان وہ ملک بن جائے کہ کوئی شہری بھوکا نہ سوئے۔

  • روز مرہ کے استعمال کی ضروری اشیا سستی کر دی جائیں، تو غریب خان کا بازو بن جائینگے۔
    مگر خان کے ارد گرد نکموں کی فوج اسکو یہ کرنے نہیں دیگی۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >