بلدیاتی انتخابات کی تاریخ دی جائے: آپ آئین نہیں کسی اورکے تابع لگتے ہیں، جسٹس فائز

سپریم کورٹ نے الیکشن کمیشن کو ایک ہفتے میں بلدیاتی الیکشن کی تاریخیں مقرر کرنےکا حکم دیا، سپریم کورٹ نے ریمارکس دیئے کہ الیکشن کمیشن پنجاب ،سندھ ،بلوچستان میں بلدیاتی انتخابات کا شیڈول دے،جسٹس قاضی فائرعیسی نے ریمارکس دیئے کہ الیکشن نہیں کروا سکتے تو مستعفی ہوجائیں، قوم پربہت ظلم ہوُچکا،مزید نہیں ہونا چاہیے، آپ آئین نہیں کسی اورکے تابع لگتے ہیں،عوام کو جمہوریت سے کیوں محروم رکھا جارہا ہے؟

سپریم کورٹ میں چاروں صوبوں میں بلدیاتی الیکشن کرانے سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی، چیف جسٹس کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے سماعت کی،چیف الیکشن کمشنر سمیت اعلیٰ حکام عدالت میں پیش ہوئے، سماعت کے آغاز پر چیف الیکشن کمشنر سکندر سلطان راجہ نے پنجاب میں بلدیاتی اداروں کی تحلیل کو غیر آئینی قرار دیتے ہوئے سپریم کورٹ کو آگاہ کیا کہ موجودہ پنجاب حکومت نے بلدیاتی حکومتوں کو تحلیل کردیا تھا، پنجاب کی صوبائی حکومت کا یہ اقدام غیر قانونی تھا۔

جسٹس فائز عیسیٰ نے استفسار کیا کہ الیکشن کمیشن نے پنجاب حکومت کیخلاف غیرآئینی اقدام پر کیا کارروائی کی؟،آپ آئین پر عمل نہیں کراسکتےتو صاف بتادیں، جس پر چیف الیکشن کمشنر نے عدالت عظمیٰ کو بتایا کہ پنجاب حکومت نےنیا بلدیاتی قانون بنالیا،بلدیاتی انتخابات نہ کروا کر سپریم کورٹ کے حکم کی خلاف ورزی ہورہی ہے،کیا چیف الیکشن کمشنراورممبران نے اپنا حلف نہیں دیکھا؟ جمہوریت نہ ہونے کی وجہ سے ہی ملک برباد ہوا چیف الیکشن کمشنرکا نام آئین میں موجود ہے، اپنی طاقت پہچانیں
الیکشن کمیشن بتائے کب بلدیاتی انتخابات کرانے ہیں؟

چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ کیا ہرباربلدیاتی انتخاب کے لیےنئے رولز بننےچاہئیں؟، اگرخیبرپختونخوا نےنئے رولز نہیں بنائےتو موجودہ رولزپر الیکشن کیوں نہیں کرائے جارہے، کیا صوبےقانون سازی موخر کرکے الیکشن کمشنر کو بے بس کرسکتےہیں؟ضمنی الیکشن کرا کر آپ نے قوم پر احسان نہیں کیا، کیا ضمنی الیکشن کرانے پر قوم آپ کوخراج تحسین پیش کرے؟ الیکشن کمیشن کا وجود ہی انتخابات کروانے کے لیے ہے، قوم پر بہت ظلم ہوچکا، مزید نہیں ہونا چاہیے۔

چیف الیکشن کمشنرنے بتایاکہ خیبرپختونخوا میں آٹھ اپریل کو بلدیاتی انتخابات کروائیں گے، جسٹس قاضی فائز عیسی نے دیگر صوبوں کی تاریخیں دینے کی ہدایت کردی،دوران سماعت جسٹس قاضی فائز عیسیٰ نےخیبرپختونخوا کو “کےپی” کہنےپر چیف الیکشن کمشنر کو جھاڑ پلادی اور ریمارکس دئیے کہ آپ آئینی عہدیدارہیں، صوبےکا نام “خیبرپختونخوا” کیوں نہیں لیتے؟، صوبے کے عوام میں نفرتیں نہ پھیلائیں۔

سپریم کورٹ میں بلدیاتی الیکشن کرانے سے متعلق کیس کی سماعت کے دوران جسٹس فائز عیسیٰ نے آرٹیکل 6 کا حوالہ دیتے ہوئے ریمارکس دئیے کہ آئین پر عمل میں رکاوٹ ڈالنے والے سنگین غداری کےمرتکب ہورہے ہیں، پنجاب،ب لوچستان آئین پر عمل نہیں کررہےتو انکے خلاف غداری کا مقدمہ چلنا چاہیے، لگتا ہے کہ الیکشن کمیشن آئین سے نہیں کہیں اور سےہدایات لے رہاہے۔

بعد ازاں سپریم کورٹ نے الیکشن کمیشن کو ایک ہفتےمیں بلدیاتی الیکشن کی تاریخیں مقرر کرنےکا حکم دیا، کیس کی سماعت میں اہم ریمارکس دیتے ہوئے جسٹس فائزعیسیٰ نے کہا کہ اگر ہم آئین پر عمل نہیں کرتے تو ہم اپنے دشمن خود ہیں، ہمیں کسی بیرونی دشمن کی ضرورت نہیں۔

کیس کی مزید سماعت ایک ہفتے کے لئے ملتوی کرتے ہوئے سپریم کورٹ نے جمعرات کو الیکشن کمیشن میں ہوئی میٹنگ کے منٹس اور پیش رفت رپورٹ طلب کرلی۔

      • This is what PMLN did to the mentality of some Pakistanis, destroyed their mental ability, who think someone who catches thieves should go to jail, not those who steal.

        This guy is not a judge, he is a joker, and in desperation to save his loot, he will continue to do blunders like these. But make no mistake, every single one of them, will pay for all the wrongs they have done to this country

      • آپ اس فین کلب کے سارے نسواریوں کی پتلوان اتروا کر معائنہ کرنے والوں کے پاس بھیجیں ۔ جب تک نسوار کا ایک دانہ بھی موجود ہے یہ لوگ کبھی نہیں سدھرتے ۔

  • PTI used to criticise PMLN and PPP that they didn’t hold local body elections. Finally, PMLN and PPP governments held elections after much delay and that too at the orders of the then Supreme Court. Now, PTI government itself is delaying local body elections and SC has to intervene again.

  • اس جج کو پہلے اپنے گریباب میں جھانکنا چاہیے، دو سال سے یہ شخص بیرون ملک اپنی جائیدادوں کا حساب نہیں دے رہا اور ڈھٹای سے اس منصب پر برجمان ہے۔ اس نے ہر معاملے میں فوج اور حکومت کو رگڑنے کی قسم کھا رکھی ہے جبکہ نواز شریف جیسے بد معاشوں کے حق میں فیصلے سناتا ہے۔

    • اے پاپا جانی پیزا چور ۔ عاصم باجوہ کے 100 پاپا جانی اسٹورز کرپشن سے نہیں بنے تھے ؟ تیرا کتے پال بونگی لینڈر اس کی تحقیقات کرواتے ہوئے شرمندہ ہوتا ہے ۔ تم جانگلوسوں کی نسل پہاڑوں سے اتر کر میدانوں میں آئ گئ ہے لیکن بھورے کا دماغ بھی ساتھ ہی لے آئ ہے ۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >